بلدیاتی انتخابات، الیکشن کمیشن کا وفاق اور صوبائی حکومتوں کو آئینی، قانونی پیچیدگیاں دو ر کرنیکا حکم 

بلدیاتی انتخابات، الیکشن کمیشن کا وفاق اور صوبائی حکومتوں کو آئینی، قانونی ...

  

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر)الیکشن کمیشن نے وفاقی و صوبائی حکومتوں کو بلدیاتی انتخابات کے راستے میں آئینی و قانونی پیچیدگیوں کو دور کرنے کا حکم دیدیا۔بدھ کو ملک بھر میں بلدیاتی انتخابات کی تیاریوں سے متعلق الیکشن کمیشن میں اہم اجلاس ہوا جس میں الیکشن کمیشن نے وفاقی و صوبائی حکومتوں سے بلدیاتی انتخابات کے راستے میں آئینی و قانونی پیچیدگیوں کو دور کرنے کا حکم دیا۔الیکشن کمیشن نے پنجاب اور خیبر پختونخوا کے صوبائی الیکشن کمشنرز سے ڈی آر اوز، آر اوز کی تعیناتی سے متعلق تجاویز طلب کرلیں۔صوبائی الیکشن کمشنرز پنجاب اور کے پی کے کو حلقہ بندیوں کی تکمیل پر ڈرافٹ پولنگ اسٹیشنز کی لسٹ فوری تیار کرنے کی ہدایت کی گئی۔الیکشن کمیشن نے پنجاب حکومت کو لوکل گورنمنٹ الیکشن رولز شائع کرنے کا حکم دیا اور کہاکہ پنجاب لوکل گورنمنٹ رولز شائع نہ ہونے کے باعث میٹروپولیٹن، میونسپل کارپوریشن، میونسپل کمیٹی، ٹاؤن کمیٹی اور تحصیل کونسلوں کے انتخابات میں دشوری آرہی ہے۔الیکشن کمیشن نے کے پی کے حکومت کو بھی لوکل کونسلز رولز کی اشاعت کرنے کا حکم دیا۔ الیکشن کمیشن نے کہاکہ یاد دہانیوں کے باوجود خیبر پختونخوا لوکل گورنمنٹ ترمیمی ایکٹ 2019 کی بعض شقوں کا اجرا نہیں کیا جاسکا۔الیکشن کمیشن نے کہاکہ صوبائی الیکشن کمیشن الیکشن ایکٹ 2017 سے متصادم بلوچستان لوکل گورنمنٹ ایکٹ میں ترمیم کے لیے مقامی حکومت کو آگاہ کرے۔ الیکشن کمیشن نے سندھ میں حلقہ بندیوں کے شیڈول اور انتظامات پر اظہار اطمینان کرتے ہوئے پنجاب اور کے پی کے میں حلقہ بندیوں کی حتمی فہرستیں 25 اکتوبر کو شائع کردی جائیں گی۔

الیکشن کمیشن 

مزید :

صفحہ اول -