ملزم کی گرفتاری کیلئے پولیس کا چھاپہ، ہاتھا پائی کے دوران دھکالگنے سے خاتون جاں بحق 

  ملزم کی گرفتاری کیلئے پولیس کا چھاپہ، ہاتھا پائی کے دوران دھکالگنے سے ...

  

  

لاہور(کرائم رپورٹر)سی آئی اے کینٹ پولیس کے واہگہ گاؤں میں چھاپے کے دوران ہاتھا پائی کے دوران تشدد کے نتیجے میں 60سالہ معمر خاتون جاں بحق ہو گئی معمرخاتون کی ہلاکت کے واقعہ پر ایس ایس پی انویسٹی گیشن ذیشان اصغر نے نوٹس لیتے ہوئی انکوائری کا حکم دے دیا تفصیلات کے مطابق سی آئی اے کینٹ نے واہگہ گاؤں میں گھر میں ریڈ کیا اس دوران پولیس اہلکار چاردر و چار دیواری کا تقدس پامال کرتے ہوئے گھر میں داخل ہو گئی جس پر اہلخانہ نے انہیں روکنے کی کوشش کی جس پر ان کے درمیان ہاتھا پائی ہو گئی اس دوران 60سالہ پروین پولیس اہلکاروں کی جانب سے  دھکا لگنے کے نتیجے میں موقع پر دم توڑ گئی واقعہ کی اطلاع ملنے پر ایس پی سی آئی اے عاصم افتخار کوواقعہ کی فوری انکوئری رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت دے دی ایس پی سی آئی کا کہنا تھا کہ  پولیس ٹیم 1 1سالہ بچے ریحان سے مبینہ بداخلاقی کے بعد قتل میں ملوث ملزم ظفر عرف جعفر کی گرفتاری کے لیے گئی تھی ملزم ظفر عرف جعفر کے پھوپھا زاد بھائی ناصر عرف نصرو نے اسے شامل تفتیش کروانے کے لیے بلایا تھا۔پولیس ٹیم نے ملزم کے گھر پرریڈ کیا اور نہ ہی چادرو چار دیواری کا تقدس پامال کیا پولیس ٹیم کے تشدد یاہاتھا پائی کے دوران خاتون کی ہلاکت کا تاثر قبل اَز وقت ہے پوسٹ مارٹم رپورٹ کے بعد ہی مزید حقائق واضح ہوں گے۔ 

 معمر خاتون کی پولیس تشدد یا بیماری کی وجہ سے طبعی موت سمیت تمام پہلوؤں سے تحقیقات کی جار ہی ہیں۔اگر کوئی اہلکار واقعہ میں قصوروارپایا گیا تو اس کے خلاف سخت قانونی و محکمانہ کاروائی عمل میں لائی جائے گئی۔

مزید :

علاقائی -