یو اے ای کا سیلاب زدگان کیلئے طبی و غذائی امداد کا اعلان 

      یو اے ای کا سیلاب زدگان کیلئے طبی و غذائی امداد کا اعلان 

  

 کراچی (خصوصی رپورٹ)اسلامی جمہوریہ پاکستان میں متحدہ عرب امارات کے سفیر  حمد عبید ابراہیم الزعابی نے کہا  ہے کہ متحدہ عرب امارات کے صدر عزت مآب شیخ خلیفہ بن زاید آل نہیان کی ہدایت کے مطابق اور ابوظہبی کے ولی عہد اور امارات کی مسلح افواج کے نائب سربراہ اعلیٰ عزت مآب شیخ محمد بن زاید آل نہیان کی مدد اور  امارات کے نائب وزیر اعظم اور وزیر صدارتی امور  اور خلیفہ بن زاید آل نہیان فاونڈیشن کے چیئرمین  شیخ منصور بن زاید آل نہیان کے براہ راست پیروی میں خلیفہ فاؤنڈیشن اسلام آباد میں متحدہ عرب امارات کے سفارتخانہ کے ساتھ مل کر، جنوبی پاکستان میں سیلاب سے متاثرہ افراد کے لئے ہنگامی امدادی پروگرام نافذ کرے گی، اور ابتدائی اندازے کے مطابق متاثرہ علاقوں میں مستفید افراد کی تعداد 75,000تک پہنچنے کی توقع ہے. سفیر الزعابی نے اس بات پر زور دیا کہ خلیفہ فاؤنڈیشن کے ذریعہ فراہم کی جانے والی یہ ہنگامی امداد متحدہ عرب امارات کے انسان دوست اور رفاہی کردارکو مستحکم بنانے اور مختلف برادر اور دوست ممالک میں اس کے ریلیف اور ترقیاتی اقدامات  کے سلسلے میں ہے۔اسلام آباد میں متحدہ عرب امارات کے سفیر حمد عبید الزعابی نے کہا کہ جلد سے جلد متاثرہ افراد کو امداد کی تقسیم اور فراہمی کے لئے ایک جامع منصوبہ تیار کیا گیا ہے، ہنگامی امدادکے پہلے مرحلے میں جنوبی سندھ  کے متاثرہ علاقوں خاص طور پر دریائے سندھ کے قریبی شہروں اور قصبوں میں  دوائیاں، خیمے، کمبل اور کھانے کی اشیاء کی  فراہمی  شامل ہیں۔سفیر الزعابی نے تاکید کی کہ سندھ اور بلوچستان میں سیلاب سے متاثرہ افراد کے لئے انسانی تعاون سے متحدہ عرب امارات کے پاکستانی عوام کے ساتھ ہمیشہ  کھڑے ہونے کے عہد کو تقویت ملی ہے۔سفیر نے بتایا کہ پاکستان اور متحدہ عرب امارات کے تعلقات کا ڈھانچہ سیاسی، معاشی اور تجارتی تعلقات، دفاع اور سلامتی کے شعبوں میں روابط، ثقافتی تعاون اور تجربات کے تبادلے پر مبنی ہے۔پاکستان میں سیلاب زدگان کی امداد کے لئے انسانی ہمدردی اور رفاہی منصوبے متحدہ عرب امارات کی انسانی بہبود کے لئے اہم اور قائدانہ کردار اور انسانی ترقی کے لیے  اس کی کوششوں کے دائرہ کار میں آتے ہیں، جوکہ متحدہ عرب امارات کی خارجہ پالیسی کا ایک لازمی اور بنیادی حصہ ہے  برادر اسلامی جمہوریہ پاکستان کے ساتھ اسکے مضبوط بنیادوں پر مبنی تعلقات  جس کا آغاز  مرحوم شیخ زاید بن سلطان آل نہیان نے 1967 ء  میں رکھا اورجنکی خیر سگالی اور انسانیت نواز  اقدامات کو 52 سال سے زیادہ کا عرصہ گزر گیا ہے اور اسی طریقہ اور نظریہ اور بنیاد کے مطابق اسلامی جمہوریہ پاکستان سے تعلقات جاری ہیں۔سفیر الزعابی نے تصدیق کی کہ اسلام آباد میں متحدہ عرب امارات کے سفارت خانے اور کراچی میں متحدہ عرب امارات کے قونصلیٹ جنرل کی تمام ورکنگ ٹیمیں اپنے فرائض بھر پور طور پر نبھا رہی ہیں، اور وہ پہلے ہی وہاں کے رہائشیوں اور خاندانوں کی امداد اور سپورٹ فراہم کرنے کے لئے موقع  پرموجود ہے  اور وزیر اعلی اور گورنر سندھ کے دفاتر اور دیگر متعلقہ اداروں اور اسٹیک ہولڈرز کے ساتھ مکمل ہم آہنگی سے  انکی امداد میں گامزن ہیں۔

مزید :

صفحہ آخر -