پانی کی عدم نکاسی، سرجانی ٹاون کی سڑکوں میں کیچڑ کی تہہ جم گئی

پانی کی عدم نکاسی، سرجانی ٹاون کی سڑکوں میں کیچڑ کی تہہ جم گئی

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر) کراچی میں مون سون کی حالیہ بارشیں ختم ہونے کے بعد بھی تاحال سرجانی ٹاؤن کے علاقہ مکینوں کی زندگی معمول پر نہ آسکی جب کہ سرجانی ٹاؤن کے مختلف علاقوں میں جمع برساتی پانی کی مکمل نکاسی نہ ہونے کے باعث سڑکوں اور گلیوں میں کیچڑ کی تہہ جم گئی ہے۔حکومتی اداروں کی عدم توجہی اور غفلت کے باعث سرجانی ٹان میں سیکٹر فور بی، بسم اللہ ٹاؤن، یوسف گوٹھ، عبدالرحیم گوٹھ سمیت مختلف علاقوں میں بارشوں کا پانی تاحال موجود ہے کئی دن برساتی پانی جمع رہنے سے سڑکوں پر کیچڑ کی تہہ جم گئی جس سے مکینوں کو آمد ورفت میں شدید مشکلات کا سامنا ہے۔سیوریج کے ناقص انتظامات کے باعث گٹروں کا آلودہ پانی گلی محلوں میں جمع ہوگیا ہے جس کے باعث ہوا میں شدید تعفن پھیل رہا ہے، گھروں کے نلکوں میں بھی آلودہ پانی آرہا ہے۔مختلف علاقوں میں پانی جمع رہنے، گندگی و غلاظت کے ڈھیر کے باعث مکھیوں اور مچھروں کی افزائش میں بھی اضافہ ہوگیا ہے جوکہ ڈنگی، ملیریا، ٹائفائیڈ، ڈائریا جیسی وبائی بیماریاں پھیلانے کا سبب بن سکتا ہے علاقے میں گزشتہ 12 روز سے بجلی کی فراہمی معطل ہے۔علاقہ مکینوں  نے بتایاکہ سرجانی ٹاؤن میں پینے کا صاف پانی تک میسر نہیں، پیسوں سے پانی خرید کر پی رہے ہیں۔ بجلی اور پانی کی تنگی کی وجہ سے گھر چھوڑنے پر مجبور ہوگئے ہیں، 12 روز سے علاقے میں بجلی کی فراہمی بھی معطل ہے جس کے سبب معمولات زندگی بری طرح متاثر ہے۔انہوں نے کہا کہ حکومتی اور سیاسی رہنما یہاں آنے سے کترارہے ہیں، ہمارا کوئی پرسان حال نہیں ہے، بارشوں کے بعد سے کوئی وزیر اور مشیر پوچھنے یا دیکھنے تک نہیں آیا، صرف سماجی ادارے یہاں کے مکینوں کو کھانے پینے کی اشیا اور مدد کررہی ہیں، حکومت اور ادارے خدارا ہماری مدد کریں ہمارا ان بنیادی مسائل کے جینا مشکل ہوگیا ہے۔

مزید :

صفحہ آخر -