2025 تک 8 ہزارمیگاواٹ بجلی متبادل ذرائع سے حاصل کرنے کاہدف ہے،عمرایوب

2025 تک 8 ہزارمیگاواٹ بجلی متبادل ذرائع سے حاصل کرنے کاہدف ہے،عمرایوب
2025 تک 8 ہزارمیگاواٹ بجلی متبادل ذرائع سے حاصل کرنے کاہدف ہے،عمرایوب

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)وفاقی وزیر توانائی عمرایوب نے کہاہے کہ حکومتی اقدامات سے آئی پی پیزکے ٹیرف میں کمی ہوئی،سابق حکومت نے درآمدی ایندھن سے بجلی بنانے کوترجیح دی،2025 تک 8 ہزارمیگاواٹ بجلی متبادل ذرائع سے حاصل کرنے کاہدف ہے۔

سولر پراجیکٹ کی افتتاحی تقریب سے وفاقی وزیر توانائی عمرا یوب نے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ ملک سے کرپشن کا خاتمہ ہو توباقی ساری چیزیں خودبخود ٹھیک ہو جاتی ہیں ،لبنان میں حکومت مستعفی ہوگئی کیونکہ وہا ں پر کرپشن تھی ،عمران خان کا نظام کی تبدیلی کیخلاف جو جہاد تھاوہ اسی لیا تھا،پاکستان میں سرمایہ کاری آرہی ہے اس سے ملازمتیں پیداہوں گی۔

انہوںنے کہاکہ حکومتی اقدامات سے آئی پی پیزکے ٹیرف میں کمی ہوئی،2 سال میں ایساکیا ہوا جس سے شمسی توانائی سے پیدابجلی کاریٹ نیچے آگیا،سابق حکومت نے درآمدی ایندھن سے بجلی بنانے کوترجیح دی، وزیر توانائی نے کہاکہ توانائی کے متبادل ذرائع پرتوجہ دے رہے ہیں،حکومت نے بجلی کے ترسیلی نظام کوبہتربنایا،بجلی کے ترسیلی نظام کی صلاحیت کو 24 ہزارمیگاواٹ تک بڑھایا،2025 تک 8 ہزار میگاواٹ بجلی متبادل ذرائع سے حاصل کرنے کاہدف ہے۔

عمرایوب نے کہاکہ پیپلزپارٹی،ن لیگ حکومت کیلئے 2 ماہ کازرمبادلہ چھوڑکرگئی تھی،کوروناوائرس کے دوران ایک صوبے نے مکمل لاک ڈاؤن کردیا،این سی اوسی کے اجلاس میں بھی روزانہ مکمل لاک ڈاؤن کی بات کی جاتی تھی،وزیراعظم صرف ایک بات کرتے تھے آپ لاک ڈاؤن کے اثرات نہیں جانتے،دنیاپاکستان کی حکمت عملی کوسراہتے ہوئے سمارٹ لاک ڈاو¿ن کواپنارہی ہے۔

مزید :

قومی -علاقائی -پنجاب -لاہور -