ریونیو ریکارڈ اپ ڈیٹ کرنیکی حکمت عملی تیار، منصور خان

ریونیو ریکارڈ اپ ڈیٹ کرنیکی حکمت عملی تیار، منصور خان

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


مظفرگڑھ خانگڑھ،روہیلانوالی(بیورورپورٹ، سٹی رپورٹر، نامہ نگار)صوبائی وزیر ریونیو نواب زادہ منصور احمد خان نے کہا ہے کہ وزیر اعلی پنجاب پرویز الہی پاکستان تحریک انصاف کے عظیم لیڈر عمران خان کے ویژ ن کواپناتے ہوئے صوبہ کو کرپشن سے پاک کرنے میں اہم (بقیہ نمبر3صفحہ6پر)
کردار ادا کر رہے ہیں۔اس سلسلہ میں محکمہ ریونیو کے ادارہ لینڈ ریکارڈ کو اپ ڈیٹ کرنے اور عوام کو اراضی فرد،انتقالات اور دیگر کوحل کرنے کے لئے اقدامات تیز کرنے کے احکامات دئیے ہیں۔ماضی کے پٹواری کلچر جو کہ معاشرے کے لئے ایک ناسور تھا کا خاتمہ جس انداز میں کیا گیا وہ تایخ کا ایک باب ہے۔ پاکستان تحریک انصاف کے عظیم لیڈر عمران خان کے ویژ ن کواپناتے ہوئے تمام سرکاری محکموں سے کرپٹ مافیا کا خاتمہ اور سفارش کلچر کے خاتمہ کا عمل جاری ہے۔اس سلسلہ میں محکمہ مال میں موجود کالی بھیڑوں کو کیفر کردار تک پہنچانے کے لئے سخت اقدامات کا عمل جاری ہے۔ وزیر مال نوابزادہ منصور احمد خان نے تمام کمشنرز،ڈپٹی کمشنرز اور محکمہ مال کو ہدایت کی ہے کہ وہ سائیلین سے انتہائی شائستگی اور پیار محبت سے ملیں اور انہیں عزت سے اپنے دفاتر میں بٹھائیں۔اپنے اپنے دفاتر میں سائیلین کے لئے ٹھنڈے پینے کے پانی کا انتظام کیا جائے اور انہیں سایہ دار جگہ پر بٹھایا جائے۔سائلین کو در پیش ہر قسم کے مسائل کو بروقت اور ہر صورت حل کیاجائے۔انہوں نے تمام افسران کو پابند کرتے ہوئے کہا ہے کہ تمام کمشنرز،ڈپٹی کمشنرز اور محکمہ مال کے افسران اپنے اپنے دفاتر میں سائلین کو درپیش شکایات کا اندراج کریں اور ان شکایات کی رپورٹس بارے منسٹر آفس کو آگاہ کیا جائے۔انہوں نے کہا ہے کہ وہ جلد صوبہ بھر میں تمام دفاتر کا سر پرائز وزٹس کریں گے۔جبکہ تمام فرد اراضی سنٹرز میں بھی چھاپوں کے دوران عوام سے عملہ کے رویہ کے بارے معلومات حاصل کرینگے۔انہوں نے کہا کہ محکمہ میں سزا اور جزا کا قانون لاگو کر دیا گیا ہے۔ حکومت پنجاب نے ڈیڑھ سو سال پرانے فرسودہ پٹوار کلچر کے نظام کو دفن کر دیا ہے اور انسانی زندگی میں زمین یعنی غیر منقولہ جائیداد سے متعلقہ ریکارڈ اور عوام کے انتہائی قیمتی حقوق کو جدید ترین طریقہ سے شفافیت کے ساتھ ہمیشہ کیلئے محفوظ کر دیا ہے۔ حکومت پنجاب نے صوبہ پنجاب میں پٹوار کلچر کے ناسور اور اسکے نتیجہ میں پیدا ہونے والی کرپشن کو جڑ سے اکھاڑ کر پھینک دیا ہے۔