درآمد ی ایل این جی فرٹیلائزر سیکٹر کو دے دی گئی

درآمد ی ایل این جی فرٹیلائزر سیکٹر کو دے دی گئی

 اسلام آباد(آن لائن) اقتصادی رابطہ کمیٹی کے فیصلے کے برخلاف درآمدی ایل این جی پاور سیکٹر کے بجائے فرٹیلائزر سیکٹر کو دے دی گئی۔ حکومت کی پالیسی کے تحت درآمدی ایل این جی ترجیحا بجلی پیدا کرنے والے نجی اداروں، آئی پی پیز کو دی جانی تھی۔ پاور سیکٹر کوا یل این جی فراہمی کے بعد اگر کوئی ٹرمنل اور پائپ لائن دستیاب ہو تب ہی فرٹیلائرز سیکٹرکو اپنی ضرورت کیلئے ایل این جی درآمد کرنے کی اجازت ہوگی۔ زرائع کے مطابق درآمد کے بعد پہلے دو دن پاورسیکٹر کو ایل این جی فراہم کی گئی، تاہم اب آئی پی پیز کی اس ری گیسیفائڈ لکوڈ نیچرل گیس کا رخ فرٹیلائزر سیکٹرکی جانب بھی موڑ دیا گیا۔ جو اقتصادی رابطہ کمیٹی کے فیصلے کی صریحا خلاف ورزی ہے۔ ماہرین درآمدی ایل این جی کے ٹھیکے پر بھی سوالات اٹھارہے ہیں حتی کہ حکومت نے اب تک اس کی قیمت کا اعلان بھی نہیں کیا ہے۔

مزید : کامرس