زرعی انقلاب لانے کے دعوے کرنیو الے حکمران زرعی تباہی کے ذمہ دار ہیں ، محمد کامران

زرعی انقلاب لانے کے دعوے کرنیو الے حکمران زرعی تباہی کے ذمہ دار ہیں ، محمد ...
زرعی انقلاب لانے کے دعوے کرنیو الے حکمران زرعی تباہی کے ذمہ دار ہیں ، محمد کامران

  

 لاہور( پ ر)چیئرمین مووآن محمد کامران نے کہا ہے کہ گنا ، کپاس ، آلو اور سبزیوں کی کم قیمتیں ملنے کی وجہ سے کاشتکارشدید مشکلات کا شکار ہیں جبکہ گندم کے کاشتکاروں کو بھی لوٹنے کی تمام تیاریاں مکمل کر لی گئیں ہیں ملک میں زرعی انقلاب لانے کے دعویدار حکمران اس اہم شعبہ کی تباہی کے ذمہ دار بن رہے ہیں۔ اگر حکومت نے اس حوالے سے ہنگامی اقدامات کرتے ہوئے انہیں آسان شرائط پر قرضے نہ دیے توزراعت کی مکمل تباہی یقینی ہے ایک بیان میں محمد کامران نے کہا کہ اس وقت کسانوں کے اربوں روپے مل اونرز، تاجروں اور آڑھتیوں کی طرف واجب الادا ہیں تاہم اس ضمن میں کوئی کارروائی کرنے کی بجائے حکومت کاشتکاروں پر ہی چڑھ دوڑی ہے لاہور میں ان کے خلاف حال ہی میں ہونے والی پْر تشدد کاروائی اس امر کا منہ بولتا ثبوت ہے۔ انہوں نے کہا کہ مہنگی بجلی اور ایندھن اور اس پر بجلی کی کئی کئی گھنٹے کی لوڈشیڈنگ نے ٹیوب ویل بند کروادیے ہیں جس سے کاشکاروں کی کمر ٹوٹ کر رہی گئی چیرمین موو ا?ن پاکستان نے کہا کہ مشکل کی اس گھڑی میں ان کے جماعت ملک کے کسانوں اور کاشتکاروں کے ساتھ کھڑی ہے اور اور کسانوں کے حقوق کی بحالی کے لئے ہر ممکن کوشش کرے گی۔ انہوں نے کہا بارشوں اورحالیہ موسم کے باعث گندم کی پیداوار کم رہنے کی توقع ہے۔ اس لئے حکومت کو ہوش کے ناخن لینے چاہیں اور کاشتکاروں اور کسانوں کا ا?سان شرا?ط پر قرضوں کا فوری اجرا ۶ شروع کرنا چاہیے

مزید : میٹروپولیٹن 1