ایس ایس پی نیکو کارہ کی برطرفی ، بیوروکریسی میں ہلچل مچ گئی

ایس ایس پی نیکو کارہ کی برطرفی ، بیوروکریسی میں ہلچل مچ گئی

لاہور(محمد نواز سنگرا)ایس ایس پی محمد علی نیکو کارہ کی برطرفی کیوجہ سے بیوروکریسی میں ہلچل مچ گئی ہے۔ بیورکریسی میں ایک جامعہ لائحہ عمل تیارکر نے پر غور کیا جا رہا ہے تاکہ سول حکومتیں بیوروکریٹس کو گھر نہ بھیج سکیں جبکہ پولیس سروس ایسوسی ایشن تمام پولیس کے اعلیٰ افسران کو خط لکھ چکی ہے کہ محمد علی نیکوکارہ نے بے گناہ شہریوں پر تشدد سے انکار اور وزیر اعظم ہاؤس میں داخل ہونے سے روکا تھا جس پر اسٹیبلشمنٹ ڈویژن نے انکوائری کے بعد انہیں نوکری سے برطرف کر دیا ہے جس کیخلاف پولیس سروس ایسوسی ایشن نے تمام آئی جیز،نیشنل پولیس سروس اسلام آباد،ڈی جی ایف آئی اے اور ڈی آئی جیز کو خط ارسال کیا ہے کہ محمد علی نیکوکارہ کیخلاف حکومت کا اقدام درست نہیں ان کی بحالی کیلئے اقدامات ہونے چاہیے۔دوسری طر ف ملک کی سول بیووکریسی میں بھی تشویش کی لہر دوڑ گئی ہے کہ منتخب سول حکومت نے ایک سی ایس پی افسرکو نوکری سے نکال دیا ہے کل کو بیورکریسی میں بھی کسی کے احکامات نہ ماننے پر اس کو بھی نوکری سے نکالا جا سکتا ہے ۔

مزید : صفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...