ماں نے دی اپنی بچی کو بچانے کیلئے ایسی قربانی کہ نئی تاریخ رقم کر دی

ماں نے دی اپنی بچی کو بچانے کیلئے ایسی قربانی کہ نئی تاریخ رقم کر دی
ماں نے دی اپنی بچی کو بچانے کیلئے ایسی قربانی کہ نئی تاریخ رقم کر دی

  

لندن (نیوز ڈیسک) برطانیہ میں ایک لیڈی پولیس اہلکار نے اپنی ننھی بچی کو بچاتے ہوئے جان کا نذرانہ پیش کرکے محبت اورجرا191ت کی مثال قائم کردی ہے۔ کارڈیف پولیس کی 41 سالہ اہلکار سارجنٹ لوئیس لوکس اور ان کی آٹھ سالہ بیٹی اولیویا سڑک پار کررہی تھیں کہ ایک رفتار بس کی زد میں آگئیں۔ لوئیس نے اپنی جان کی پرواہ نہ کرتے ہوئے اپنی بچی کو کچلے جانے سے بچانے کے لئے اپنی زندگی داؤ پر لگادی۔ وہ بچی کو ایک طرف دھکیلنے میں کامیاب ہوگئیں لیکن اسی دوران خود بس کے نیچے آکر کچلی گئیں۔ انہیں فوری طور پر موریسٹن ہسپتال لے جایا گیا جہاں وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے چل بسیں۔ بہادر پولیس اہلکار تین بچوں کی ماں تھیں اور اپنے شفیق اور زمہ دارانہ رویے کی وجہ سے بہت پسند کی جاتی تھیں۔ ان کے 21 سالہ بیٹے گرانٹ کا کہنا ہے کہ پچھلے دو ہفتے کے دوران ان کی والدہ اْن سے غیر معمولی شفقت اور پیار کا اظہار کررہی تھیں اور وہ نہیں جانتے تھے کہ وہ انہیں ہمیشہ کے لئے چھوڑ کر جانے والی ہیں۔ سارجنٹ لوئیس کو کارڈیف شہر کے لوگوں نے بھرپور خراج تحسین پیش کیا ہے اور مقامی پولیس افسران نے بھی ان کی موت کو بہت بڑا سانحہ اور ناقابل تلافی نقصان قرار دے دیا ہے۔

مزید : صفحہ آخر