بلی نے دو اشتہاری مہموں میں کام کیا اور 30 لاکھ یورو کما لئے

بلی نے دو اشتہاری مہموں میں کام کیا اور 30 لاکھ یورو کما لئے
بلی نے دو اشتہاری مہموں میں کام کیا اور 30 لاکھ یورو کما لئے

  

لاس اینجلس (نیوز ڈیسک) پالتو بلیوں کو اکثر محبت اور آسائش سے بھرپور زندگی میسر ہوتی ہے لیکن فیشن ڈیزائنر کارل لاجرفیلڈ کی بلی بہت ہی خاص اور شاندار زندگی سے لطف اندوز ہورہی ہے۔ شوپیٹ نامی یہ بلی ناصرف ایک کامیاب اور مقبول ماڈل ہے بلکہ اسے دنیا کی امیر ترین بلی ہونے کا اعزاز بھی حاصل ہے۔82 سالہ لاجر فیلڈ کہتے ہیں کہ سب سے پہلے جرمنی کی ایک کمپنی نے ان کی بلی کو کاروں کے ایک اشتہار میں کردار ادا کرنے کے لئے منتخب کیا اور اس کے بعد جاپان کی ایک کمپنی نے بیوٹی مصنوعات کے اشتہار کے لئے اسے منتخب کیا۔ وہ کہتے ہیں کہ ان کی بلی دنیا کی مشہور ترین بلی ہے اور وہ لگڑری مصنوعات کے اشتہارات میں کام کرنا پسند کرتی ہے جبکہ چھوٹی موٹی کمپنیوں کے عام اشتہارات میں کام کرکے خوش نہیں ہوتی ہے۔ گزشتہ سال اس بلی نے دو اشتہاری مہموں میں کام کیا اور 30 لاکھ یورو کمائے۔ اس بلی کے ٹویٹر اور انسٹا گرام اکاؤنٹ بھی ہیں جن پر اس کے مداحوں کی تعداد ہزاروں میں ہے۔لاجر فیلڈ کی ماڈل بلی ان کے ساتھ ڈنر ٹیبل پر کھانا کھاتی ہے جبکہ اس کی تراش خراش اور بیوٹی کیئر کا کام مہنگے ترین بیوٹی پارلروں سے کروایا جاتا ہے۔ اس کی دیکھ بھال کے لئے دو ذمہ دار ملازمائیں بھی رکھی گئی ہیں جو اس کے ساتھ کھیلتی ہیں، اسے کھانا کھلاتی ہیں اور اس کے حسن و جمال کا خیال رکھتی ہیں۔ یہ بلی نیویارک میگزین سمیت کئی مشہور فیشن میگزینوں کے سرورق کی زینت بھی بن چکی ہے۔ لاجر فیلڈ کہتے ہیں کہ ان کی سٹائلش بلی کیٹ ماس اور نومی کیمبل جیسی سپر ماڈلز سے کم نہیں ہے اور یہ ان کے لئے عزیز ترین دوست کی حیثیت بھی رکھتی ہے۔

مزید : صفحہ آخر