فوجی عدالتوں کیخلاف درخواستوں پر سپریم کورٹ کا فل کورٹ بنچ تشکیل

فوجی عدالتوں کیخلاف درخواستوں پر سپریم کورٹ کا فل کورٹ بنچ تشکیل
فوجی عدالتوں کیخلاف درخواستوں پر سپریم کورٹ کا فل کورٹ بنچ تشکیل

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

اسلام آباد (آن لائن) چیف جسٹس ناصر الملک نے فوجی عدالتوں کے قیام کے خلاف 21 ویں ترمیم کی سماعت کے لئے فل کورٹ بنچ قائم کر دیا ہے جو 16 اپریل کو 18 ویں، 19 ویں اور 21 ویں ترامیم کے خلاف درخواستوں کی ایک ساتھ سماعت کرے گا۔ چیف جسٹس کی سربراہی میں فل کورٹ بنچ نے تمام فریقین کو نوٹس بھی جاری کر دیئے ہیں۔ سپریم کورٹ بار، لاہور ہائی کورٹ بار، پاکستان بار کونسل سمیت 12 درخواستوں کی سماعت کی جائے گی۔ شاہد اوکرزئی نے 19 ویں ترمیم کے خلاف درخواست دائر کی تھی جس کو سماعت کے لئے منظور کر لیا گیا تھا وہ بھی سماعت کا حصہ ہو گی۔ چیف جسٹس ناصر الملک کے ساتھ جسٹس جواد ایس خواجہ، جسٹس انور ظہیر جمالی، جسٹس میاں ثاقب نثار، جسٹس آصف سعید خان کھوسہ سمیت دیگر ججز شامل ہیں جو سماعت کریں گے۔ دوسری جانب لاہور ہائیکورٹ بار نے فوجی عدالتوں کیخلاف کیس میں حامد خان کو الگ کرنے کا فیصلہ کر لیا ہے، شفقت چوہان پیروی کرینگے۔

مزید : اسلام آباد