یکم جولائی سے گیس مہنگی کرنے کی درخواست دیدی گئی

یکم جولائی سے گیس مہنگی کرنے کی درخواست دیدی گئی
یکم جولائی سے گیس مہنگی کرنے کی درخواست دیدی گئی

لاہور (ویب ڈیسک) سوئی ناردرن نے حکومت کو یکم جولائی 2015ء سے گیس کی قیمت میں ساڑھے 46 روپے فی ایم ایم پی ٹی یو اضافے کی درخواست دیدی ہے، آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی کو بھجوائی جانیوالی 131 صفحات پر مشتمل درخواست کے ساتھ دس لاکھ روپے کی فیس کا پے آرڈر بھی لگایا گیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ حکومت کی طرف سے ایل این جی کی قیمت کا تعین نہ کرنے کی وجہ سے ہم ابھی تک اس سے استفادہ نہیں کرسکے اور سوئی ناردرن کو اس وقت تقریباً 25 اربر وپے کے خسارے کا سامنا ہے جس کو پورا کرنے کے لئے حکومت کمپنی کو یکم جولائی 2015ء سے گیس کی قیمت میں مذکورہ اضافے کی اجازت دے۔ اوگرا کو بھیجی گئی درخواست کے مطابق اگلے مالی سال کے دوران 3 لاکھ 1 ہزار 20 گیس کنکشن لگائے جائیں گے جن میں سے تین لاکھ گھریلو، 1000 کمرشل اور 20 انڈسٹریل کنکشن ہوں گے، مذکورہ تین لاکھ گھریلو کنکشنوں میں سے دس فیصد 30 ہزار فاسٹ ٹریک سسٹم کی بنیاد پر فراہم کئے جائیں گے۔ یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ اوگرا نے ابھی تک سال 2012-13ء، 2013-14ء اور سال 2014-15ء کے حسابات کی منظوری نہیں دی جس پر سوئی ناردرن نے اوگرا کو دی گئی درخواست میں بتایا تھا کہ اسے سال 2012-13ء اور 2013-14ء کے دوران اس مد میں سوا 20 ارب روپے کے خسارے کا سامنا کرنا پڑا ہے، اس طرح 2015-16ء اور اس سے گزشتہ 3 برسوں سمیت سوئی ناردرن کو مجموعی طور پر 85 ارب 73 کروڑ 40 لاکھ روپے کے خسارے کا سامنا کرنا پڑرہا ہے۔

مزید : بزنس

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...