آصف علی زرداری کی عمران کو حکومت سے معاہدے پر مبارکباد،پارلیمنٹ میں واپس آنے کی دعوت

آصف علی زرداری کی عمران کو حکومت سے معاہدے پر مبارکباد،پارلیمنٹ میں واپس آنے ...
آصف علی زرداری کی عمران کو حکومت سے معاہدے پر مبارکباد،پارلیمنٹ میں واپس آنے کی دعوت

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

نوڈیرو(مانیٹرنگ ڈیسک )پیپلزپارٹی کے شریک چیئرمین آصف علی زرداری نے عمران خان کوحکومت سے معاہدے پر مبارکباد دی اور قومی اسمبلی میں واپس آنے کی دعوت دے دی ہے۔تفصیلات کے مطابق بھٹو کی برسی کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ان کا کہناتھاکہ تمام معاملات کو پارلیمنٹ میں حل کیا جانا چاہیے اس لیے تحریک انصاف کو پارلیمنٹ میں واپس آنا چاہیے ۔عمران خان کو مخاطب کرتے ہوئے انہوں نے کہا’کپتان صاحب!آپ کو مبارک ہو۔‘

ان کا کہنا تھا کہ جوڈیشل کمیشن پر ٹرمز آف ریفرنس کافی نہیں ہے الیکشن کمیشن کو مل کر مالیاتی طور پر مضبوط کرنا ہو گا۔آصف علی زرداری نے کہا ہے کہ یمن کے معاملے پر پارلیمنٹ میں بات کی جائے اس معاملے پر سب صوبوں کو مل کر فیصلہ کرنا چاہیے۔ان کاکہنا تھا کہ حکومت سے گلاہے کہ انہوں نے ہم سے مشورہ نہیں کیا ہم حکومت کا ساتھ دیں گے کہی ایسانہ ہو کے میاں صاحب آپ کوئی سمجھوتہ کر لے آپ پہلے بھی مجھے جیل میں چھوڑ کر چلے گئے تھے ہمارے کارکنوں نے کوڑے کھائے جیل گئے مگر کسی نے معافی نامہ نہیں لکھ کر دیا۔

متحدہ الیکشن ہار چکی ہے، فوج اور رینجرز کے بغیر الیکشن کروانے کی ضرورت نہیں

پیپلزپارٹی کے شریک چیئرمین نے کہا ہے کہ ہمارے بچوں کو ماضی آگ سے آج بھی خطرہ ہے آج تاریخ شہداءکا حساب مانگ رہی ہے ۔ان کاکہنا تھا کہ بھٹونے مسلمانوں کیلئے کتابیں لکھیں انہیں ایک پلیٹ فارم پر اکٹھا کیا۔ انہوں نے واضح کیا کہ سندھ کے مسائل بہت زیادہ ہیں جنہیں حل کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے سندھ میں 18،18گھنٹے لوڈ شیڈنگ ہوتی ہے۔آصف علی زرداری کا کہنا تھا کہ خادمین شریفین کی عزت کرتے ہیں ان کیلئے ان کی جان بھی حا ضر ہے مگر مسلم دنیا کو لڑا کر انہیں کمزور کیا جارہا ہے۔

مزید : قومی /اہم خبریں