باکسنگ دو صوبوں کا نہیں پورے ملک کا پسندیدہ کھیل ہے:محمد شریف

باکسنگ دو صوبوں کا نہیں پورے ملک کا پسندیدہ کھیل ہے:محمد شریف

لاہور (سپورٹس رپورٹر) انٹرنیشنل گولڈ میڈلسٹ باکسر اور عالمی باکسنگ تنظیم آئباسے سرٹیفائیڈسٹارون ریفری سید محمد شریف نے کہا ہے کہ باکسنگ دو صوبوں کا نہیں پورے ملک کا پسندیدہ کھیل ہے جس کے ذریعے دنیا بھر میں پاکستان کا نام روشن ہوا، پاکستان کو سیف گیمز ، ایشین گیمز ، کامن ویلتھ گیمز ، ورلڈ باکسنگ چمپئن شپ اور اولمپکس مقابلوں میں میڈلز دینے والے اس کھیل کو بھی سیاست کی نذر کیا جارہاہے ، حکومت سابق سیکرٹری پاکستان باکسنگ فیڈریشن اکرم خان جیسے لوگوں کو ذمہ داری سونپ کر باکسنگ کے کھیل سے ناآشنالوگوں سے جتنی جلدی جان چھوڑالے گی پاکستان باکسنگ کے لئے اتناہی اچھا ہوگا۔ گزشتہ روز میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے سابق باکسر کا کہنا تھا کہ پروفیسر انور چوہدری کے انتقال کے بعد 4 سال تک باکسنگ کے سیکرٹری اکرم خان اور خزانچی علی اکبر شاہ نے باکسنگ کو فروغ دینے میں اپنا کردارادا کیا اور کئی کھلاڑیوں کو ملکی وغیرملکی سطح پر متعارف کرایا، ان دونوں شخصیات نے باکسنگ کی بے پناہ خدمت کی لیکن بعد میں اکرم خان کی راہ میں روڑے اٹکائے گئے جس سے اس کھیل کی تباہی کا سلسلہ شروع ہوگیا۔

انہوں نے کہا کہ یہ تاثر غلط ہے کہ باکسنگ صرف دو صوبوں تک محدود ہے پوراپاکستان اس کھیل کے ٹیلنٹ سے بھرا ہوا ہے جس کا ثبوت یہ ہے کہ پاکستان نے اپنے کم وسائل کے باوجود سیف گیمز ، ایشین گیمز ، کامن ویلتھ گیمز ، ورلڈ باکسنگ چمپئن شپ اور اولمپکس میں میڈل حاصل کیئے لیکن افسوس کہ اب یہ کھیل بھی سیاست کی نذر ہوچکا ہے اور اس کے ذمہ دار وہ لوگ ہیں جو یہ تاثر دینے کی کوشش کررہے ہیں کہ باکسنگ صرف دوصوبوں کا کھیل ہے انہوں نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ باکسنگ کے کھیل سے سیاست ختم کرکے فیڈریشن میں موجود نان ٹیکنیکل لوگوں کو فارغ کرکے اس کھیل کو فروغ دینے والے لوگوں کے حوالے کیا جائے تاکہ پاکستان مستقبل میں بھی باکسنگ کے ذریعے مزید میڈلز جیت سکے ۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی


loading...