سائبیریا کی شدید سرد زسائبیریا میں زیرزمین خطرناک بلبلوں کی موجودگی کا انکشاف

سائبیریا کی شدید سرد زسائبیریا میں زیرزمین خطرناک بلبلوں کی موجودگی کا ...

 ماسکو(مانیٹرنگ ڈیسک)مین میں پوشیدہ گیس کے بڑے بڑے بلبلوں کا انکشاف ہوا ہے جو کسی بھی وقت پھٹ کر بڑی تباہی کو جنم دے سکتے ہیں۔اس طرح کا پہلا بلبلہ 2013 میں دریافت ہوا تھا جس کے بعد سے اب تک ایسے درجنوں بلبلے دریافت ہوچکے ہیں جبکہ حال ہی میں ماہرین نے اندازہ لگایا ہے کہ سائبیریا کے ’یمل‘ اور ’گائیدان‘ نامی علاقوں میں ان کی تعداد 7 ہزار یا اس سے بھی زیادہ ہوسکتی ہے۔سطح زمین سے قریب ہونے کی وجہ سے ان گیسی بلبلوں کے اوپر موجود مٹی نرم پڑگئی ہے اور بعض مقامات پر پیر رکھنے سے کسی اسفنج کی طرح دب جاتی ہے۔ سائنسدانوں کا کہنا ہے کہ ایسے کسی بھی بلبلے میں میتھین کی مقدار ارد گرد کی ہوا کے مقابلے میں ایک ہزار گنا زیادہ اور کاربن ڈائی ا?کسائیڈ کی مقدار 25 گنا تک زیادہ ہوسکتی ہے۔

مزید : صفحہ آخر


loading...