کرک ،ڈسٹرکٹ بار کے صدر اپنے ہی وزراء اورحکومت پربرس پڑے

کرک ،ڈسٹرکٹ بار کے صدر اپنے ہی وزراء اورحکومت پربرس پڑے

کرک (بیورورپورٹ) ڈسٹرکٹ بار ایسوسی ایشن کا سابق صدر وعدہ خلافی پر اپنے ہی صوبائی ووزراء، حکومت پر برس پڑا قائد پی ٹی آئی سے وعدہ خلافی کا نوٹس لینے اور ووزراء کو سزا دینے کا مطالبہ کردیا ۔سوموار کے روز میڈیا کے نمائندوں سے خصوصی گفتگو میں انصاف لائرز فورم کے کہنہ مشق قانون دان اور ڈسٹرکٹ بار ایسوسی ایشن کے سابق صدر محبوب خان ایڈووکیٹ نے اس امر پر انتہائی افسوس کا اظہار کرتے ہوئے بتایا کہ دو سال قبل بار کی حلف برداری تقریب میں پارٹی کا پرچم مزید بلند کرنے کی غرض سے میں نے صوبائی وزیر قانون امتیاز قریشی ،صوبائی مشیر جیل خانہ جات ملک قاسم خان اور حلقہ ایم پی اے گل صاحب خان کو مدعو کرکے ان کی خاطرتواضع پر ذاتی جیب خرچ سے ڈیڑھ لاکھ روپے بھی خرچ کئے تھے جس پر صوبائی وزیر قانون نے 30 لاکھ ،صوبائی مشیر جیل خانہ جات نے 60 لاکھ اور حلقہ ایم اے نے50 لاکھ روپے گرانٹ دینے کا اعلان کیا تھا مگر دو سال گذرنے کے بعد بھی ماسوائے گل صاحب خان کے پندرہ لاکھ روپے کے دوسروں نے ایک پائی تک نہیں دی ہے انہوں نے کہا کہ میں نے متعدد بار اس سلسلے میں مذکورہ ممبران صوبائی اسمبلی سے رابطہ کیا اور پارٹی امیج کا واسطہ دیا مگر وہ ٹھس سے مس نہیں ہوئے جس کے باعث نہ صرف میں بار کے ووکلاء کے سامنے مذاق بن کر رہ گیا ہوں بلکہ پارٹی کی امیج بھی انتہائی خراب ہوئی ہے انہوں نے کہا کہ قابل افسوس امر یہ ہے کہ اگر میرے ساتھ دھوکہ دہی میں وہ ذرہ برابر شرم ،جھجک محسوس نہیں کرتے تو عام آدمی کیساتھ ان کا کیسا برتاؤ ہوگاانہوں نے عمران خان سے مطالبہ کیا کہ دوسروں کو انصاف ،احتساب کا درس دینے سے پہلے اپنے ہی پارٹی کے صوبائی ووزراء ،وزیر اعلی کا احتساب کرکے انکو اپنے اعلانات کا پابند بنائیں تاکہ پارٹی پر عوام کا اعتماد بحال رہے ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...