پارٹی الیکشن نہ کرانے پر تحریک انصاف کو دو ماہ کیلئے ضمنی انتخابات لڑنے سے روک دیا گیا

پارٹی الیکشن نہ کرانے پر تحریک انصاف کو دو ماہ کیلئے ضمنی انتخابات لڑنے سے ...
پارٹی الیکشن نہ کرانے پر تحریک انصاف کو دو ماہ کیلئے ضمنی انتخابات لڑنے سے روک دیا گیا

  


اسلام آباد (ویب ڈیسک) پاکستان تحریک انصاف کو انٹرا پارٹی الیکشن میں تاخیر مہنگی پڑگئی، الیکشن کمشن نے دو ماہ کیلئے ضمنی الیکشن لڑنے پر پابندی لگا دی جس کی وجہ سے پاکستان تحریک انصاف پی پی 23 چکوال سمیت 4 صوبائی حلقوں میں اپنے انتخابی نشان پر ضمنی انتخاب نہیں لڑ سکے گی،الیکشن کمشن نے چار ضمنی انتخابات سے باہر کردیا۔ پی پی 23 چکوال میں کپتان کے کھلاڑی کوبلے کے نشان کے بغیرالیکشن لڑنا پڑے گا ۔

الیکشن کمشن ذرائع کے مطابق پی ٹی آئی کو اپریل اور مئی میں ہونے والے ضمنی انتخابات میں حصہ لینے کی اجازت نہیں ہوگی ۔ پی پی 23 چکوال میں 18 اپریل کو ضمنی الیکشن کیلئے عمران خان نے اتوار کو جلسہ کیا تھا مگر ان کے امیدوار کو پارٹی کا انتخابی نشان الاٹ نہیں کیا گیا ۔ سندھ اسمبلی کے حلقے پی ایس 81 سانگھڑ میں 20 اپریل کو ، خیبرپی کے میں پی کے 54 مانسہرہ اور پی کے 82 کوہستان میں 10 مئی کو ضمنی انتخابات ہوں گے ۔ وہاں بھی کپتان کے کھلاڑی بلے کے بغیر میدان میں اتریں گے۔

الیکشن کمیشن کے اس فیصلہ کے خلاف تحریک انصاف نے عدالت میں جانے کا اعلان کر دیا۔ ذرائع کے مطابق پٹیشن میں تحریک انصاف الیکشن کمشن کے حکم کو غیرقانونی اور غیرآئینی قرار دے گی۔ پٹیشن میں الیکشن کمشن کا حکم واپس لینے کی استدعا کی جائے گی۔

مزید : قومی


loading...