جڑواں شہروں اور مری میں تیز آندھی اور بارش ، مختلف شاہراہوں پر سیلابی صورتحال اور بجلی کا نظام درہم برہم ,درخت جڑوں سے اکھڑ کر شاہراہوں پر گرگئے ، کئی گاڑیاں پھنس گئیں

جڑواں شہروں اور مری میں تیز آندھی اور بارش ، مختلف شاہراہوں پر سیلابی ...
جڑواں شہروں اور مری میں تیز آندھی اور بارش ، مختلف شاہراہوں پر سیلابی صورتحال اور بجلی کا نظام درہم برہم ,درخت جڑوں سے اکھڑ کر شاہراہوں پر گرگئے ، کئی گاڑیاں پھنس گئیں

  


اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) راولپنڈی,  اسلام آباد اور مری میں تیز آندھی اور بارش سے مختلف شاہراہوں پر سیلابی صورتحال پیدا ہو گئی،  راولپنڈی کے بے نظیر انٹرنیشنل ایئر پورٹ پر فلائٹ آپریشن معطل ہو گیا،  مری میں بھی تیز ہواؤں اور ژالہ باری سے بجلی کا نظام درہم برہم ہو گیا ،  تیز آندھی سے اسلام آباد کے مختلف علاقوں میں درخت جڑوں سے اکھڑ کر شاہراہوں پر گر گئے جس کے باعث کئی گاڑیاں پھنس کر رہ گئیں،  آندھی کی رفتار 60کلو میٹر فی گھنٹہ تھی۔ بدھ اور جمعرات کو بھی 100 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے آندھی چلنے کا امکان ہے۔

راولپنڈی اور اسلام آباد میں وقفے سے سے ہونے والی مسلسل بارش  اور  طوفانی آندھی  سے بے نظیر ایئر پورٹ پر فلائٹ آپریشن  بھی معطل ہو گیا،  اندرون اور بیرون ملک پروازیں اڑان نہ بھر سکیں، جس سے مسافروں کو شدید پریشانی کا سامنا کرنا پڑا جبکہ  میٹرو بس کے ٹریک پر پانی بھی  کھڑا ہو گیا اور مری روڈ پر بل بورڈ گر گئے۔

دوسری جانب اسلام آباد میں بھی طوفانی آندھی اور طوفانی بارش نے تباہی مچا دی۔ تیز آندھی سے اسلام آباد کے مختلف علاقوں میں درخت جڑوں سے اکھڑ کر شاہراہوں پر آ گرے۔ طوفانی بارش سے اسلام آباد کی سڑکوں پر سیلابی صورتحال پیدا ہو گئی۔ اسلام آباد کے سیکٹر جی 6میں کئی گاڑیاں پانی میں پھنس گئیں۔ تیز آندھی سے اسلام آباد کی کچی آبادیوں میں کئی گھروں کی چھتیں اڑ گئیں ا ور کئی گھروں کی چھتوں سے پانی کی ٹینکیاں بھی اڑ گئیں۔ مری میں بھی تیز ہوا اور ژالہ باری سے بجلی غائب ہو گئی۔ محکمہ موسمیات کے مطابق اندھی کی رفتار 60کلو میٹر فی گھنٹہ تھی۔ بدھ اور جمعرات کو بھی 100کلو میٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے آندھی چلنے کا امکان ہے۔

مزید : اسلام آباد


loading...