سعودی عرب میں مقیم غیرقانونی پاکستانی تارکین قونصل خانے سے اپنے کاغذات بنواکر وطن روانہ ہوں: قونصل جنرل شہریار خان

سعودی عرب میں مقیم غیرقانونی پاکستانی تارکین قونصل خانے سے اپنے کاغذات ...
سعودی عرب میں مقیم غیرقانونی پاکستانی تارکین قونصل خانے سے اپنے کاغذات بنواکر وطن روانہ ہوں: قونصل جنرل شہریار خان

  


جدہ (محمد اکرم اسد) پاکستانی قونصلیٹ جنرل جدہ کی طرف سے اپنے ہم وطنوں کی سہولت اور انہیں سعودی فرمانروا شاہ سلمان بن عبدالعزیز کی طرف سے غیر قانونی مقیم تارکین کو بغیر کسی جرمانہ اور سزا کے تین ماہ کے اندر اپنے ممالک کو روانگی کے سلسلہ میں سروسز اور معلومات کے لئے جو کاﺅنٹر قائم کئے تھے، پچھلے پانچ دنوں میں وہاں 5500 درخواستیں موصول ہوئیں جن میں سے صرف جدہ میں 2000پاکستانیوں نے آﺅٹ پاس کے لئے درخواستیں دی تھیں جنہیں قلیل مدت یعنی 405 دنوں میں آﺅٹ پاس جاری کردئیے گئے جبکہ قونصل جنرل شہریار اکبر خان کی ہدایت پر اس کام کو مزید تیز کرنے کے لئے اس مدت کو مزید کم کیا جارہا ہے تاکہ آﺅٹ پاس اسی دن یا اگلے دن تک جاری کردیا جائے جبکہ 800 تارکین وطن نے اپنے پاسپورٹ کی تجدید کے لئے درخواستیں دی جنہیں اسی دن پاسپورٹ تجدید کرکے دے دئیے گئے۔ قونصل جنرل شہریار خان کا کہنا ہے کہ ان کی کوشش ہے کہ پاکستانی غیر قانونی تارکین جن کے پاس سفری دستاویزات نہیں ہیں وہ جلد از جلد بنواکر اپنے معاملات جوازات سے مکمل کرواکر سہولت سے فائدہ اٹھاتے ہوئے وطن روانہ ہوسکیں۔ قونصل جنرل نے دوسرے شہروں کے لئے بھی خصوصی ٹیمیں بھیجنے کی منظوری دیتے ہوئے کہا کہ ہم نہیں چاہتے کہ کوئی پاکستانی غیر قانونی اس سہولت سے فائدہ اٹھانے سے رہ جائے۔ پچھلے جمعہ ہفتہ کو ایک خصوصی ٹیم نے مدینہ منورہ کے پاکستان ہاﺅس میں دو روزہ کیمپ لگا کر کوئی 500 کے قریب پاکستانیوں کو سروسز مہیا کی گئیں جن میں 150آﺅٹ پاس جاری کئے گئے جبکہ بقایا نے اپنے معاملات کو درست کروانے کے لئے سیر حاصل معلومات حاصل کیں جو شاہی مہلت سے فائدہ اٹھانے کے لئے کافی ہوں۔ جدہ قونصلیٹ میں قائم خصوصی کاﺅنٹر صبح سات سے شام ساڑھے آٹھ بجے تک ساتوں دن یہ سوس مہیا کررہا ہے جہاں کوئی بھی تارکین ان اوقات بشمول چھٹی والے دن رابطہ کرکے معلومات اور سروسز حاصل کرسکتا ہے۔ قونصلیٹ کی خصوصی ٹیموں کو مغربی زون کے دوسرے شہروں میں بھیجنے کی بھی منصوبہ بندی کی ہے تاکہ پاکستانی تارکین کو دور دراز ان کے اپنے شہروں میں پہنچ کر یہ سروسز مہیا کی جاسکیں۔ یاد رہے کہ سعودی فرمانروا نے مملکت کو ”غیر قانونی تارکین سے پاک“ کرنے کی مہم جو تین ماہ جاری رہے گی معافی کا اعلان کیا تھا، ان تین ماہ میں تمام غیر قانونی تارکین کو مہلت دی ہے کہ وہ بغیر کسی جرمانے اور سزا کے مملکت سے اپنے وطنوں کو روانہ ہوجائیں، اس مہلت سے فائدہا ٹھانے والے کسی بھی جرمانہ یا سزا سے مبرا ہوں گے۔

مزید : عرب دنیا


loading...