کورونا کیخلاف جنگ میں ڈاکٹرز،پاک فوج اورپولیس فرنٹ لائن پرلڑرہے ہیں،انجینئر امیرمقام

کورونا کیخلاف جنگ میں ڈاکٹرز،پاک فوج اورپولیس فرنٹ لائن پرلڑرہے ...

  

پشاور(سٹی رپورٹر)پاکستان مسلم لیگ ن خیبرپختونخوا کے صوبائی صدر انجینئر امیر مقام نے کہاہے کہ کوروناوائرس کیخلاف جنگ میں ڈاکٹرز،نرسزکمپوڈرز،پیرامیڈیکل،پاک فوج اورپولیس فرنٹ لائن پرلڑرہے ہیں،اپنی جان کی پرواہ کئے بغیرڈاکٹرز اور پیرامیڈیکل سٹاف دن رات اپنے فرائض انجام دے رہے ہیں جنہیں ہم خراج تحسین پیش کرتے ہیں۔ان خیالات کااظہارانہوں نے صوبہ خیبرپختونخواکے بڑے ہسپتالوں حیات آبادمیڈیکل کمپلیکس،لیڈی ریڈنگ ہسپتال کے میڈیکل ڈائریکٹرزڈاکٹرزاورینگ ڈاکٹرزایسوسی ایشن کے رہنماؤں میں پاکستان مسلم لیگ(ن)کی جانب سے ڈاکٹرز،نرسز،کمپوڈرز،پیرامیڈیکل سٹاف کیلئے حفاظتی کیٹس کی پہلی کھیپ دینے کے بعدبات چیت کرتے ہوئے کیا،انجینئرامیرمقام نے کہاکہ مشکل کی اس گھڑی میں ڈاکٹرزاوران کی ٹیم کی جانب سے خدمات ہمیشہ یادرکھے جائیں گے، ملک کی تشویشناک صورتحال میں جب قوم فاقوں سے مر رہی ہے روزگار ختم ہوچکا ہے ایسے حالات میں عمران خان نے آٹا چینی چوروں اور گندم چوروں کے لیے ایک نئی ٹائیگر فورس بنا ڈالی جو کہ قوم کے زخموں پر نمک پاشی کے برابر ہے،اس سے قبل نیازی کے اے ٹی ایم نے آٹا اور گندم سکینڈل میں خوب مال بنایامگرغریبوں کوانصاف دینے کے نام نہادلیڈرنے ان چینی چوروں اورآٹاچوروں کیخلاف کوئی کاروائی نہیں کی۔،صوبائی صدرانجینئرامیرمقام نے مزید کہا کہ صوبے کے وہ مزدور جو مختلف کوئلے کے کانوں،معدنیات کے کانوں وکارخانوں میں مزدوری کرتے تھے اور وہ اپنے شہروں سے دور مختلف کیمپوں میں محصور ہو چکے ہیں، نہ ان کے پاس راشن ہے نہ ان کے پاس کھانے کو روٹی ہے اور نہ ہی خرچہ،اورستم ظریفی یہ کہ وہ اپنے آبائی علاقوں تک ٹرانسپورٹ کی بندش سے پہنچ بھی نہیں سکتے۔انہوں نے حکومت سے پرزور مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ ایسے مزدوروں کو فی الفور راشن مہیا کیا جائے انہیں جیب خرچ مہیا کیا جائے اور اس کے بعد ان کے آبائی علاقوں تک پہنچانے کا بندوبست کیا جائے جوحکومت کی ذمہ داری ہے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -