امپورٹرز‘ ایکسپورٹرز کو سہولیات فراہم کرنے کیلئے کوشاں ہیں‘ جلال الدین رومی

امپورٹرز‘ ایکسپورٹرز کو سہولیات فراہم کرنے کیلئے کوشاں ہیں‘ جلال الدین ...

  

ملتان (نیوز رپورٹر)پنجاب ریونیواتھارٹی نے30 جون 2020 تک ملتان سمیت صوبہ بھر کی ڈرائی پورٹس میں امپورٹ ہونے والی شپمنٹس پر عائد پنجاب انفراسٹرکچرڈویلپمنٹ سیس ختم کرتے ہوئے نوٹیفکیشن جاری کردیاہے۔اس حوالے چیئرمین پنجاب ریونیو اتھارٹی کیجانب سے جاری کردہ نوٹیفکیشن کے مطابق سب سیکشن6پنجاب انفراسٹرکچرڈویلپمنٹ سیس ایکٹ 2015 کو پنجاب حکومت کی منظوری سے ا?ئندہ چند ماہ کے لیے موجودہ ملکی صورتحال کے(بقیہ نمبر60صفحہ6پر)

پیش نظر تمام امپورٹس کو استثنی دیاگیاہے تاکہ کرونا کے باعث صنعتوں کیموجودہ مسائل میں کمی لائی جاسکے۔حکومت کی جانب سے پنجاب انفراسٹرکچر سیس معطل کر نے کے فیصلے کا چیئرمین ملتان ڈرائی پورٹ ٹرسٹ خواجہ جلال الدین رومی نے خیرمقدم کرتے ہوئے حکومتی فیصلے کو سراہاہے انہوں نے کہا کہ حکومت سے گزشتہ چند سالوں سے تاجروں اور صنعتکاروں کی جانب سے پنجاب انفراسٹرکچرمیں کے خاتمے کا مطالبہ کیا جارہاتھا کیونکہ تاجروں کو امپورٹ ہونیوالی اشیا پر دوہرے ٹیکسز دینے پڑتے تھے جس پر حکومت نے موجودہ حالات میں بہترین فیصلہ کرتے ہوئے انفراسٹریکچرڈویلپمنٹ سیس ختم کرنے کا فیصلہ کیاہے جس سے جنوبی پنجاب کے امپورٹرز کی حوصلہ افزائی ہوگی اور وہ اپنی امپورٹ کنسائنمنٹس ملتان ڈرائی پورٹ سے کلئیرکروائے گے جس سے خطے میں ترقی کے مزید مواقع پیدا ہوں گے اور ملتان ڈرائی ٹرسٹ امپورٹرزاور ایکسپورٹرزکو بہترین کلیئرنس سہولیات فراہم کرنے کے لیے ہمہ وقت کوشاں ہے انہوں نے امپورٹرزسے اپیل کی ہے کہ ملتان ڈرائی پورٹ کی سہولیات سے مستفیدہوں تاکہ خطے میں ترقی کینئے مواقع پیداہوسکے۔

کوشاں

مزید :

ملتان صفحہ آخر -