معروف گلوکارہ نازیہ حسن کی 55ویں سالگرہ منائی گئی‘ دعائیہ تقریبات

  معروف گلوکارہ نازیہ حسن کی 55ویں سالگرہ منائی گئی‘ دعائیہ تقریبات

  

ملتان (سٹاف رپورٹر)پاکستان میں پاپ موسیقی کونیا انداز دینے والی گلوکارہ نازیہ حسن کے ملتان میں پرستاروں کی جانب سے55ویں سالگرہ منائی گئی۔ تفصیلات کے مطابق برصغیر میں پاپ موسیقی کے بانیوں میں شمار کی جانے والی گلوکارہ نازیہ حسن 3اپریل1965کو کراچی میں پیدا ہوئیں۔ 1980 میں 15 سال کی عمر میں وہ اس وقت شہرت کی بلندیوں تک پہنچ گئیں جب انہوں نے بھارتی فلم'' قربانی (بقیہ نمبر39صفحہ6پر)

"کا گیت ”آپ جیسا کوئی میری زندگی میں آئے تو بات بن جائے گایا“ جسکے بعد 1981 میں ریلیز ہونے والے نازیہ حسن کے پہلے البم“ڈسکو دیوانے“ نے سابقہ تمام ریکارڈ توڑ دیئے۔عالمی شہرت یافتہ شمارے ٹائمز نے نازیہ حسن کو اس وقت کی ان با اثر پچاس شخصیات کی فہرست میں شامل کیا، اپنے بھائی زوہیب حسن کے ساتھ مل کرنازیہ حسن نے 1982 میں بوم بوم، 1986میں ینگ ترنگ،1987ء میں ہاٹ لائن اور1992ء میں کیمرا کیمرا کے ناموں سے چار البم ریلیزکئے۔یہ بہن بھائی جلد ہی نوجوانوں میں بے حد مقبول ہوئے۔نازیہ حسن دلکشی، فن اور شہرت میں اپنی مثال آپ تھیں،ان خوبیوں کے ساتھ قدرت نے جہاں نازیہ پر بے حساب مہربانیاں کیں‘ وہیں ان کی زندگی بہت مختصر رکھی۔نازیہ حسن محض35 برس کی عمر میں پھیپھڑوں کے کینسر میں مبتلا ہو کر13 اگست سال 2000 کو اس دار فانی سے رخصت ہوگئیں لیکن ان کی سریلی آواز اور مسکراتا چہرہ پرستاروں میں آج بھی مقبول ہے۔انہیں 2002 میں حکومت پاکستان کی طرف سے بعدازوفات پرائیڈ آف پرفارمنس سے بھی نوازا گیا۔

نازیہ حسن

مزید :

ملتان صفحہ آخر -