کورونا وائرس کی وجہ سے کتنے پاکستانی بیروزگار ہوجائیں گے؟ ہوش اُڑا دینے والے اعدادوشمار سامنے آگئے

کورونا وائرس کی وجہ سے کتنے پاکستانی بیروزگار ہوجائیں گے؟ ہوش اُڑا دینے والے ...
کورونا وائرس کی وجہ سے کتنے پاکستانی بیروزگار ہوجائیں گے؟ ہوش اُڑا دینے والے اعدادوشمار سامنے آگئے

  

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) کورونا وائرس سے پاکستانی معیشت کو کتنا نقصان پہنچے گا اور کتنے لوگ بے روزگار ہو جائیں گے۔ اس حوالے سے وزارت منصوبہ بندی نے ایسے ہولناک تخمینہ اعدادوشمار جاری کر دیئے ہیں کہ سن کر ہوش اڑ جائیں۔ ایکسپریس ٹربیون کے مطابق وزارت منصوبہ بندی کی طرف سے بتایا گیا ہے کہ ملک میں کورونا وائرس کی وجہ سے 3ماہ میں 1کروڑ23لاکھ سے 1کروڑ 85لاکھ تک لوگ بے روزگار ہوں گے اور معیشت کو 2سے اڑھائی ٹریلین روپے کا نقصان اٹھانا پڑے گا۔ وزارت کے حکام کی طرف سے یہ اعدادوشمار ایک بین الوزارتی میٹنگ میں بیان کیے۔ اس تخمینے کی تیاری میں مختلف حکومتی اداروں کی طرف سے ملنے والی معلومات پر انحصار کیا گیا۔ اس حوالے سے ابتدائی تحقیق پاکستان انسٹیٹیوٹ آف ڈویلپمنٹ اکنامکس نے کی۔

یہ تخمینہ لاک ڈاﺅن کے تین مختلف مراحل کی بنیاد پر لگایا گیا ہے، محدود لاک ڈاﺅن، مناسب لاک ڈاﺅن اور مکمل لاک ڈاﺅن۔ پاکستان محدود لاک ڈاﺅن سے آگے نکل چکا ہے اور اس وقت مناسب یا درمیانے درجے کے لاک ڈاﺅن کے مرحلے میں ہے جبکہ مکمل لاک ڈاﺅن کی طرف بڑھ رہا ہے۔وزارت منصوبہ بندی کی طرف سے بتایا گیا ہے کہ اگر پاکستان میں محدود لاک ڈاﺅن پر گزارا ہو جاتا تو معیشت کو 1.2ٹریلین روپے تک کا نقصان ہوتا۔ اب اگر درمیانے درجے کے لاک ڈاﺅن تک بات رہ جائے تو معاشی نقصان 1.96ٹریلین روپے کا ہو گا اور اگر نوبت مکمل لاک ڈاﺅن تک چلی جاتی ہے تو معاشی نقصان 2.5ٹریلین ڈالر تک ہو گا۔مکمل لاک ڈاﺅن کرفیو کی سی صورتحال ہو گی۔

مزید :

علاقائی -اسلام آباد -کورونا وائرس -