’رن وے پر جہاز روک کر امریکی خریداروں نے 3 گنا قیمت ادا کی اور فرانس جانے والے ماسکس خود خرید کر لے گئے‘

’رن وے پر جہاز روک کر امریکی خریداروں نے 3 گنا قیمت ادا کی اور فرانس جانے والے ...
’رن وے پر جہاز روک کر امریکی خریداروں نے 3 گنا قیمت ادا کی اور فرانس جانے والے ماسکس خود خرید کر لے گئے‘

  

بیجنگ(مانیٹرنگ ڈیسک) کورونا وائرس کے باعث دنیا میں فیس ماسک اور دیگر ایسی مصنوعات کی شدید قلت ہو چکی ہے۔ گزشتہ دنوں امریکی خریداروں نے چین سے فیس ماسک فرانس لیجانے والے کارگو طیارے کو رن وے پر روک لیا اور تین گنا قیمت ادا کرکے یہ لاکھوں فیس ماسک خود خرید لیے اور جہاز کا رخ فرانس کی بجائے امریکہ کی طرف کروا دیا۔ میل آن لائن کے مطابق یہ جہاز شنگھائی ایئرپورٹ سے فرانس کے لیے روانہ ہو رہا تھا۔ فرانس کی طرف سے ان فیس ماسکس کا آرڈر دیا گیا تھا۔

رپورٹ کے مطابق جب کارگو جہاز فرانس کا یہ آرڈر پہنچانے شنگھائی ایئرپورٹ سے نکلنے والا تھا، امریکی خریدار وہاں پہنچ گئے اور تین گنا زیادہ قیمت نقد ادا کرکے تمام ماسک خود خرید لیے۔ فرانسیسی گرانڈ ایسٹ ریجنل کونسل کے صدر ڈاکٹر جین روتھر نے آر ٹی ایل ریڈیو سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ ”لاکھوں فیس ماسک طیارے میں لوڈ ہو چکے تھے اور طیارہ روانہ ہونے ہی والا تھا کہ امریکی خریدار رن وے پر آ گئے اور تین گنا نقد رقم کی پیشکش کر دی، جس پر چینی کمپنی نے یہ کھیپ فرانس کی بجائے امریکہ بھجوا دی۔ فرانس نے اس کھیپ کی قیمت ڈلیوری کے بعد ادا کرنی تھی لیکن امریکی رقم اپنے ساتھ رن وے پر لے کر آ گئے تھے جس پر ہم یہ بولی ہار گئے۔“

مزید :

بین الاقوامی -