سیلز ٹیکس معاملہ،کمشنر انکم ٹیکس ملتان زون ریکارڈ سمیت طلب

سیلز ٹیکس معاملہ،کمشنر انکم ٹیکس ملتان زون ریکارڈ سمیت طلب

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

ملتان(نیوز رپورٹر) ان لینڈ ریونیومحکمہ FBRکی جانب سے رجسٹرڈ افراد کو محض شبہ کی بنا پرسیلز ٹیکس میں suspendاور blacklist کیے جانے کے خلاف  عدالت اپیلٹ ٹریبونل ان لینڈ ریونیو نے کمشنر انکم ٹیکس ملتان زون زاہد محمود کو ذاتی حیثیت میں ریکارڈ سمیت طلب کیا۔ معزز عدالت کے جج صاحبان میاں عبدالباسط جوڈیشل ممبر اور عمران لطیف منہاس اکانٹنٹ (بقیہ نمبر49صفحہ7پر)

ممبر نے زاہد محمود سے سوالات کیے جن کے جوابات کمشنر ملتان زون تسلی بخش نہ دے سکے۔ٹیکس گزاران کی نمائندگی صدر ملتان ٹیکس بار میاں عبدالستار جنرل سیکریٹری محمد عمران غازی سینئر ممبران محمد یونس غازی ملک خادم حسین میتلا عثمان ہادی عنایت الرحمن تنویر احمد صائم قدیر شیخ دانیال نواب نصیر الدین ہمایوں ریاض گیلانی محمد جمیل سمیت دیگر نے کی۔ معزز عدالت نے کمشنر ملتان زون سے استفسار کیا کہ محض شبہ کی بنیاد پر قانون سیلز ٹیکس رجسٹریشن کو suspendکرنے کی اجازت دیتا ہے؟ کیا supply chain میں تمام افراد کوبغیر تحقیق اور ٹیکس ذمہ داری کی تشخصیص کے suspendکیا جاسکتا ہے؟ کیا بغیر نوٹس کیے سیلز ٹیکس کو suspendکیا جاسکتا ہے؟ کیا محض FBR کی جانب سے رپورٹ موصول ہونے پر قانون کسی شخص کا کاروبار بند کرنے کی اجازت دیتا ہے؟ ان تمام سوالات کے جوابات کمشنر زاہد محمود نہیں دے سکے۔ معزز عدالت کے استفسار پر کہ کیا ٹیکس گزاران کو suspensionآرڈرز کی تعمیل کرائی گئی ہے؟ جس پر کمشنر زاہد محمود خاموش رہے۔ عدالتی کاروائی کے آخر میں ملتان ٹیکس بار اور دیگر وکلا کا موقف سننے کے بعد عدالت نے فیصلہ صادر کرتے ہوئے کہا کہ سیلز ٹیکس کا قانون کسی بھی شخص کا کاروبار محض شبہ پر بند کرنے کی اجازت نہیں دیتا۔ جبکہ تمام suspension آرڈرز مروجہ طریقہ کار اور قانون سے ہٹ کر کیے گئے ہیں۔ جبکہ ریکارڈ کے مطابق آرڈرز کی ٹیکس گزاران کو تعمیل بھی ثابت نہیں ہوتی۔ لہذامعزز عدالت نے کمشنر ملتان زون کو ہدایات جاری کرتے ہوئے تمام متاثرہ افراد کا سیلز ٹیکس فوری بحال کرنے کا حکم جاری کیا ہے۔[6:29 pm, 03/04/2024] Tariq Ansari: یوٹیلیٹی سٹور کارپوریشن میں کرپٹ افسروں کے خلاف کریک ڈان،ریجنل منیجر بہاولپورسمیت متعددافسران معطل،اے ایس ایم اسلام آبادکے خلاف مقدمہ درج