غیر فروخت شدہ سٹاک60ہزار 475گانٹھ روئی موجود 

غیر فروخت شدہ سٹاک60ہزار 475گانٹھ روئی موجود 

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

ملتان(نیوز رپورٹر)پاکستان کاٹن جنرز ایسوسی ایشن (پی سی جی اے)نے کپاس کی فیکٹریوں میں آمد کے اعدادو شمار جاری کر دیئے ہیں جسکے مطابق 31مارچ2024تک ملک کی جننگ فیکٹریوں میں 83لاکھ 96ہزار557گانٹھ کپاس آئی۔ 31مارچ2023تک 49 لاکھ12 ہزار 69 گانٹھ کپاس فیکٹریوں میں آئی تھی۔گذشتہ سال کی اسی مدت کے مقابلے میں 34لاکھ 84ہزا  ر 4 8 8  گانٹھ کپاس فیکٹریوں میں زیادہ آئی ہے۔ اضافے کی شرح 70.94فیصد رہی۔ صوبہ پنجاب کی فیکٹریوں میں 42لاکھ 81ہزار779گانٹھ کپاس آئی ہے جو گذشتہ سال (بقیہ نمبر8صفحہ7پر)

کی اسی مدت میں فیکٹریوں میں آنے والی فصل30لاکھ33ہزار50گانٹھ کپاس سے 12لاکھ48ہزار729گانٹھ زائدہے۔ پنجاب میں اضافے کی شرح41.17فیصد رہی۔صوبہ سندھ کی فیکٹریوں میں 41لاکھ 14 ہزار 778گانٹھ کپاس فیکٹریوں میں آئی ہے جو کہ گذشتہ سال اسی مدت میں فیکٹریوں میں آنے والی فصل18لاکھ79ہزار19گانٹھ کپاس سے 22لاکھ35ہزار759گانٹھ زیادہ    ہے۔صوبہ سندھ میں اضافے کی شرح 118.99فیصدرہی۔ 31مارچ2024تک فیکٹریوں میں آنے والی کپاس سے83 لاکھ93ہزار261گانٹھ روئی تیار کی گئی۔ ملک میں 18جننگ فیکٹریاں آپریشنل ہیں۔ ایکسپورٹرز/ٹریڈرز نے رواں سیزن میں 2 لاکھ 92  ہزار 726 گانٹھ روئی خرید کی ہے جبکہ ٹیکسٹائل سیکٹرنے 80لاکھ 43ہزار356گانٹھ روئی خرید کی ہے۔ ٹریڈنگ کارپوریشن آف پاکستان(TCP)نے کاٹن سیزن 2023-24میں خریداری نہیں کی ہے۔ صوبہ پنجاب میں 17جننگ فیکٹریاں آپریشنل ہیں اور42لاکھ79ہزار383گانٹھ روئی تیار کی گئی ہے۔ ضلع ملتان میں 31مارچ2024تک66ہزار756گانٹھ کپاس،ضلع لودھراں میں 94ہزار115گانٹھ کپاس،ضلع خانیوال میں 2لاکھ17ہزار 507گانٹھ کپاس، ضلع مظفر گڑھ میں 80 ہزار599گانٹھ کپاس،ضلع ڈیرہ غازی خان میں 3لاکھ71ہزار833گانٹھ کپاس، ضلع راجن پور میں 31ہزار825گانٹھ کپاس ضلع لیہ میں 2 لاکھ34 ہزار469گانٹھ کپاس،ضلع وہاڑی میں 2لاکھ 19 ہزار 251گانٹھ کپاس، ضلع ساہیوال میں 2 لاکھ 1ہزار 654گانٹھ کپاس، ضلع رحیم یار خان میں 6لاکھ21ہزار744گانٹھ کپاس،ضلع بہاولپورمیں 5لاکھ74ہزار680گانٹھ کپاس، ضلع بہاولنگر میں 11لاکھ66ہزار770گانٹھ کپاس فیکٹریوں میں آئی ہے۔ ضلع سانگھڑمیں 16لاکھ95ہزار 310گانٹھ کپاس، ضلع میر پور خاص میں 1لاکھ 35 ہزار 900 گانٹھ کپاس، ضلع نواب شاہ میں 1لاکھ78ہزار615گانٹھ کپاس، ضلع نو شہرو فیروز میں 3لاکھ22 ہزار926 گانٹھ کپاس، ضلع خیر پور میں 3لاکھ 58ہزار414گانٹھ کپاس، ضلع سکھر میں 5لاکھ49ہزار337گانٹھ کپاس، ضلع جام شورومیں 63 ہزار200گانٹھ کپاس اور ضلع حیدرآباد میں 2لاکھ30ہزار654گانٹھ کپاس اور صوبہ بلوچستان میں  1 لاکھ87ہزار221گانٹھ فیکٹریوں میں آئی ہے۔ غیر فروخت شدہ سٹاک60ہزار  475گانٹھ کپاس اور روئی موجود ہے۔