نائب صدر جوبیڈن صدارتی دوڑ میں شریک ہونے کو تیار

نائب صدر جوبیڈن صدارتی دوڑ میں شریک ہونے کو تیار

واشنگٹن (اظہر زمان، بیوروچیف) امریکی نائب صدر جوبیڈن کے بارے میں چند روز سے افواہ گردش کر رہی تھی کہ وہ ڈیمو کریٹک پارٹی کی طرف صدارتی ٹکٹ کے امیدوار ہوسکتے ہیں۔ آج وائٹ ہاؤس کے ترجمان جوش ارنسٹ نے ایک پریس بریفنگ مییں تصدیق کر دی کہ وہ واقعی صدارتی دوڑ میں شریک ہونے کے لئے تیار ہو رہے ہیں۔ ڈیمو کریٹک پارٹی کی طرف سے ابھی تک میدان میں اترنے والے تمام امیدواروں میں سابق صدر بل کلنٹن کی اہلیہ اور سابق وزیر خارجہ ہیلری کلنٹن سب سے زیادہ مضبوط امیدوار تصور ہوتی تھیں اور مبصرین کے خیال میں انہیں صدر بارک اوباما کی حمایت بھی حاصل ہوسکتی تھی جو امریکی آئین کے تحت تیسری مرتبہ صدارتی امیدوار نہیں بن سکتے۔ تاہم اگر جوبیڈن امیدوار بنتے ہیں جو بارک اوباما کے خاص معتمد ہیں تو انتخابی نقشہ یکسر تبدیل ہوسکتا ہے۔ وائٹ ہاؤس کے ترجمان نے ’’فوکس نیوز‘‘ کو انٹرویو دیتے ہوئے صاف بتایاہے کہ جوبیڈن نے صدارتی امیدوار بننے کا واضح اشارہ دیتے ہوئے کہا ہے کہ وہ اس سلسلے میں سوچ رہے ہیں۔ ترجمان کا کہنا ہے کہ نائب صدر جوبیڈن 2009ء سے صدر اوباما کے ساتھ مل کر کام کر رہے ہیں اور پارٹی کے پرائمری انتخابات میں جب پارٹی ٹکٹ کا فیصلہ ہوگا تو اس وقت اس سے آگے رہنے والی ٹکٹ کی امیدوار ہیلری کلنٹن کو وہ سب سے بڑا چیلنج دے سکتے ہیں۔ ’’فوکس نیوز‘‘ نے اس صورت حال پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ اگرچہ ہیلری کلنٹن صدر اوبامہ کے ساتھ وزیر خارجہ کے طور پر کام کرچکی ہیں لیکن ان دونوں خاندانوں کے درمیان اختلافات ڈھکے چھپے نہیں ہییں، تاہم وائٹ ہاؤس کے ترجمان نے ایک سوال کے جواب میں بتایا کہ جوبیڈن اور ہیلری کلنٹن کے درمیان مقابلہ ہوتا ہے تو صدر اوباما چاہیں گے کہ پارٹی کے ووٹر صحیح جذبے کے ساتھ میرٹ پر فیصلہ کریں۔

مزید : صفحہ اول