بھارتی پولیس سٹیشن پر حملہ کو جواز بنا کر سیریز منسوخ کرنا بچگانہ رویہ ہے: جاوید میانداد

بھارتی پولیس سٹیشن پر حملہ کو جواز بنا کر سیریز منسوخ کرنا بچگانہ رویہ ہے: ...
بھارتی پولیس سٹیشن پر حملہ کو جواز بنا کر سیریز منسوخ کرنا بچگانہ رویہ ہے: جاوید میانداد

  

لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک) پاک بھارت کرکٹ سیریز پر بھارت کے بلاوجہ بہانے بازی نے پاکستان کے لیجنڈ کھلاڑی جاوید میانداد کو بھی برہم کر دیا ہے جنہوں نے بی سی سی آئی کے سیکرٹری انوراگ ٹھاکر کے رویے کو کھیل کی سپرٹ کے منافی اور قابل مذمت قرار دیدیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق جاوید میانداد نے کہاکہ انوراگ ٹھاکر کا رویہ کھیل کی سپرٹ کے منافی اور قابل مذمت ہے،پاکستانی کرکٹرز بھی بھارت میں کھیلتے ہوئے خود کو غیر محفوظ محسوس کرتے تھے لیکن ہماری طرف سے ہمیشہ مثبت سوچ کا مظاہرہ کیا گیا جس کے باعث مقابلوں کا انعقاد ہوتا رہا۔انہوں نے کہا کہ پاک بھارت مقابلے شائقین کی بھرپور توجہ کا مرکز بنتے ہیں، ان کی اہمیت انگلینڈ اور آسٹریلیا کے مابین ایشز سیریز سے بھی زیادہ ہوتی ہے۔ ان کا کہناتھا کہ یو اے ای میں کئی ٹیمیں پاکستان کے ساتھ اچھے ماحول میں کھیل چکی ہیں لیکن بی سی سی آئی کی جانب سے سیریز نہ کھیلنے کیلئے انتہائی بھونڈا جواز بنایا گیا ۔ اس انداز سے دونوں ممالک کے کرکٹ اور سیاسی تعلقات میں بہتری نہیں لائی جاسکتی۔

واضح رہے کہ بھارتی پنجاب کے شہر گورداس پور میں پولیس سٹیشن پر حملے کا الزام پاکستان پر دھرتے ہوئے بھارت نے دسمبر میں یو اے ای میں شیڈول باہمی سیریز کے امکانات مسترد کر دیئے تھے۔ بھارتی بورڈ کے سیکرٹری انوراگ ٹھاکر جو سیاستدان بھی ہیں، کا کہنا تھا کہ ہماری قوم کی سیکیورٹی اور ملکی امن داو¿ پر لگا ہو تو پاکستان سے کرکٹ نہیں کھیل سکتے، ہمارے لیے اپنے ملک کی سالمیت اور ہر بھارتی شہری کی زندگی زیادہ اہمیت رکھتی ہے۔

مزید : کھیل