صلح کے بدلے باپ نے 2 سالہ بیٹی ونی کی بھینٹ چڑھا دی مخالف کے 4 سالہ بیٹے سے نکاح

صلح کے بدلے باپ نے 2 سالہ بیٹی ونی کی بھینٹ چڑھا دی مخالف کے 4 سالہ بیٹے سے نکاح
صلح کے بدلے باپ نے 2 سالہ بیٹی ونی کی بھینٹ چڑھا دی مخالف کے 4 سالہ بیٹے سے نکاح

  

میانوالی (ویب ڈیسک) صلح کے بدلے باپ نے 2/3 سالہ معصوم بچی کو ونی کی بھینٹ چڑھادیا، مخالف کے 4/5 سالہ بیٹے سے نکاح کر دیا ۔

تفصیلات کے مطابق واں بھچراں کی پولیس پارٹی کو اطلاع ملی کہ مظفر پور جنوبی میں محمد عرفان اور عبدالستار کے مابین ، جو رشتہ دار ہیں، کافی عرصہ سے سنگین رنجش چلی آرہی تھی جنہوں نے آپس میں راضی نامہ کیاہے اور محمد عرفان اس راضی نامہ میں اپنی 2/3 سالہ نابالغ بیٹی سعدیہ بی بی کا نکاح عبدالستار کے 45 سالہ نابالغ بیتے عمیر کے ساتھ کر رہا ہے جن کا شرعی نکاح جامع مسجد اعوانوالی کا امام مسجد مولوی محمد عمران پڑھارہا ہے.

پولیس پارٹی موقع پر پہنچی تو نکاح پڑھایا جا چکا جسے ونی کی بھینٹ چڑھنے والی بچی کے والد محمدعرفان نے تسلیم کیا، پولیس نے ملزمان کے خلاف تعزیرات پاکستان کی دفعہ 310-A کے تحت مقدمہ درج کر کے کارروائی شروع کر دی ہے۔

مزید : میانوالی