سعدیہ سہیل نے چلڈرن ہسپتال کے حوالے سے تحریک التواء اسمبلی میں جمع کر ا دی

سعدیہ سہیل نے چلڈرن ہسپتال کے حوالے سے تحریک التواء اسمبلی میں جمع کر ا دی

لاہور(نمائندہ خصوصی) تحریک انصاف کی رکن پنجاب اسمبلی سعدیہ سہیل رانا نے ایک تحریک التوائے کار پنجاب اسمبلی میں جمع کروا دی ہے جس میں کہا گیا ہے کہ نجی اخبار کی خبر کے مطابق چلڈرن ہسپتال میں پھول سے بچوں کا مناسب علاج معالجہ خواب بن گیا ہے بستر کم ہونے کے باعث ایک بیڈ پر 4 سے 5 مریض جبکہ انتہائی نگہداشت وارڈ میں بچوں کا زمین پر لٹا کر ہی ڈرپ لگا دی جاتی ہے۔

ایمرجنسی میں روزانہ ایک ہزار مریض آتے ہیں جبکہ 52 کی بجائے صرف 42 بیڈز، ٹیسٹ کے لئے کئی کئی مہینوں کا ٹائم دیا جاتا ہے۔ ڈاکٹرز اپنے دفاتر میں خوش گپیاں لگاتے رہتے ہیں جبکہ وارڈز میں نرسیں ان کا کام نمٹا رہی ہیں ہسپتال مین 56 وینٹی لیٹرز مگر فعال صرف 43 ہیں، ایم آئی آر کے لئے وقت ہی نہیں ملتا، ادویات مفت نہی ہی کوئی ٹیسٹ فری، مریضوں کے لواحقین آپریشن کا سامان بھی باہر سے لانے پر مجبور ہیں، واش رومز انتہائی گندے اور پانی بھی موجود نہیں اور صفائی کا انتظام بھی ناقص ہے جس سے حکومتی ترجیحات کا اندازہ لگایا جا سکتا ہے

مزید : میٹروپولیٹن 1