جموں کشمیر  پیپلز پارٹی کا پاکستان مسلم لیگ نواز کے ساتھ اتحاد ختم کرنے کا اعلان

جموں کشمیر  پیپلز پارٹی کا پاکستان مسلم لیگ نواز کے ساتھ اتحاد ختم کرنے کا ...
جموں کشمیر  پیپلز پارٹی کا پاکستان مسلم لیگ نواز کے ساتھ اتحاد ختم کرنے کا اعلان

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

اسلام آباد(ڈی این ڈی )جموں کشمیر پیپلز پارٹی نے پاکستان مسلم لیگ نواز کے ساتھ اتحاد ختم کرکے غیر سیاسی صدارتی نامزدگی کے خلاف بھرپور احتجاج کا اعلان کر دیا ہے۔
اسلام آباد میں اپنے ساتھیوں کے ہمرا ہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے جموں کشمیر پیپلز پارٹی کے سربراہ سردار خالد ابراہیم نے کہا کہ مسلم لیگ نواز کے ساتھ گزشتہ پانچ سال سے انتخابی اتحاد تھا تاہم حالیہ الیکشن کے بعد حکومت سازی اور صدارتی امیدوار کی نامزدگی میں مسلم لیگ نوازانے انہیں مشاورتی عمل سے نظر انداز کیا۔انہوں نے کہا کہ غیر سیاسی اور بیوریو کریٹ کی بطور ریاست کے صدر نامزدگی نا قابل قبول ہے اس کے خلاف بھر پور احتجاج کریں گے۔
خالد ابراہیم کا کہنا تھا کہ وہ اپوزیشن میں رہ کر اپنا بھر پور مثبت اورسیاسی کردار ادا کریںگے۔اپوزیشن لیڈر کے حوالے سے ان کا کہنا تھا کہ ابھی فیصلہ نہیںکیا کہ کس کی حمایت کی جانی چاہئے۔
ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ پیپلز پارٹی کا خواتین کی مخصوص نشست پر مسلم لیگ نواز سے حمایت حاصل کرنا ان کے اپوزیشن کے کردار کو مشکوک کرتا ہے،لہذا اسمبلی میں جا کر ہی حقیقی اپوزیشن کا کردار ادا کرنے والی جماعتوں کے ساتھ تعاون کیا جائے گا۔انہوں نے کہا کہ ہم خود ایک بڑی اپوزیشن ہیں۔سردار ابراہیم خان نے ہمیشہ اصولوں کی سیاست کی ہے، ہم بھی ان جمہوری اصولوں کی کی بنیاد پر اپنا جمہوری کر دار ادا کریں گے اور ایک حقیقی اپوزیشن کا کردار ادا کریں گے۔مسلم لیگ نواز آزاد کشمیر کے فیصلے حقیقت میں اسلام آباد میں ہوتے ہیں۔
خالد ابراہیم حالیہ الیکشن میں راوالا کوٹ سے مسلم لیگ نواز کے انتخابی اتحادی تھے اور اس مشترکہ اتحاد کے پلیٹ فارم سے ممبر قانوں ساز اسمبلی منتخب ہوئے ہیں۔

مزید :

اسلام آباد -