ہار اور جیت کی کوئی حیثیت نہیں،کسی طالع آزما کو اسلامی احکامات سے کھیلنے کی ہر گز اجازت نہیں دیں گے:صاحبزادہ ابوالخیر محمد زبیر 

ہار اور جیت کی کوئی حیثیت نہیں،کسی طالع آزما کو اسلامی احکامات سے کھیلنے کی ...
ہار اور جیت کی کوئی حیثیت نہیں،کسی طالع آزما کو اسلامی احکامات سے کھیلنے کی ہر گز اجازت نہیں دیں گے:صاحبزادہ ابوالخیر محمد زبیر 

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

حیدر آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)جمعیت علماء پاکستان (نورانی) کے سربراہ اور ملی یکجہتی کونسل کے صدر ڈاکٹر صاحبزادہ ابوالخیر محمد زبیر نے کہا کہ ہماری سیاست کا مقصد پلاٹ، پرمٹ اور عہدوں کا حصول نہیں بلکہ نظام مصطفےٰ ﷺکے نفاذ کی جدوجہدکے ذریعہ اللہ اور اس کے رسولﷺ  کی رضا حاصل کرناہے ،اس میں ہار اور جیت کی کوئی حیثیت نہیں ہے۔

جے یو پی ضلع حیدرآباد کے ورکرز کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے صاحبزادہ ابوالخیر محمد زبیر  کا کہنا تھا کہ اس راہ میں جو بھی جدوجہد کریگا وہ اللہ اور اس کے رسول ﷺ کی رضا حاصل کر کے دونوں جہاں میں کامیاب اورجیتا ہوا ہوگا،علماء کو جو’’ منبر‘‘ ملا ہوا ہے وہ اس پارلیمنٹ کی’’ ممبری‘‘ سے کہیں زیادہ اہم اور اعلیٰ ہے ،اس کے سامنے اس ممبری کی کوئی حیثیت نہیں، علماء یہ ممبری صرف اس لئے حاصل کرنا چاہتے ہیں تاکہ پارلیمنٹ میں اسلامی احکامات کے نفاذ کی جدوجہد کریں اور اسلامی احکامات کے خلاف حکمرانوں کی طرف سے اگر کوئی سازش کی جائے تو اس کاوہاں بیٹھ کر مقابلہ کرسکیں لیکن اگر سیکولر عناصر یہ سمجھتے ہیں کہ وہ علماء کا پارلیمنٹ میں راستہ روک کر اپنی من مانی کرلیں گے تو یہ انکی بھول ہے ۔انہوں نے کہا کہ علماء امربالمعروف ا ور نہی عن المنکر کا فریضہ پارلیمنٹ کے باہر بیٹھ کر بھی ادا کرتے رہیں گے اور کسی طالع آزما کو اسلامی احکامات سے کھیلنے کی ہر گز اجازت نہیں دیں گے۔

مزید : علاقائی /سندھ /حیدرآباد