قربانی کا تناسب2019 کے مقابلے میں 25.9فیصد کم رہا

قربانی کا تناسب2019 کے مقابلے میں 25.9فیصد کم رہا

  

 لاہور (آن لائن) کورونا وائرس کی وباء کی وجہ سے پیدا ہونے والی معاشی صورتحال اور مہنگائی کے باعث رواں سال ملک بھر میں قربانی کا تناسب گزشتہ سال کے مقابلے میں 25.9فیصد کم رہاہے،امسال ملک بھرمیں مجموعی طو رپر 60لاکھ جانورذبح کئے گئے جبکہ گزشتہ سال یہ تعداد81لاکھ تھی۔پاکستان ٹینریز ایسوسی ایشن کے سابق چیئرمین آغا سیدین کے مطابق رواں سال ملک بھرمیں عیدالاضحی کے موقع پر 60لاکھ جانوروں کی قربانی دی گئی جبکہ گزشتہ سال 81لاکھ جانور قربان کئے گئے۔گزشتہ سال قربانی کے جانوروں کی مالیت 242ارب روپے تھی جبکہ امسال عید کیلئے خریدے جانے والے جانوروں کی مالیت 174ارب روپے رہی۔ گزشتہ سال کھالوں کی مالیت 5.25ارب روپے تھی جو کہ امسال 1.75ارب روپے رہ گئی۔ انہوں نے بتایا کہ گزشتہ سال 30لاکھ گائے،40لاکھ بکرے،10لاکھ بھیڑیں اور ایک لاکھ اونٹوں کی قربانی دی گئی جبکہ امسال 20لاکھ گائے،31لاکھ40ہزار بکرے،8لاکھ بھیڑیں اور60ہزار اونٹ ذبح کئے گئے۔ انہوں نے کہاکہ گزشتہ سال گائے کی کھال کی قیمت1400روپے رہی جبکہ امسال یہ قیمت 600سے700لگ بھگ رہی، گزشتہ سال بکرے کی کھال کی قیمت275روپے سے300روپے جبکہ امسال اوسط قیمت 150روپے رہی۔ 

قربانی

مزید :

صفحہ اول -