غیر قانونی استعمال، کئی علاقوں میں بجلی فراہمی میں تعطل کا سبب ہے 

غیر قانونی استعمال، کئی علاقوں میں بجلی فراہمی میں تعطل کا سبب ہے 

  

 پشاور (سٹاف رپورٹر) بجلی کا ناجائز استعمال کئی علاقوں میں بجلی فراہمی میں تعطل کا سبب ہے،صارفین سے درخواست ہے کہ وہ کنڈے ہٹادیں تاکہ بجلی فراہمی مستحکم بنیادوں پر جاری رکھی جاسکے.تھوڑ پھوڑ مسائل کا حل نہیں شدید گرمی اور بجلی کے ناجائز استعمال کی وجہ سے خیبرپختونخوا کے چند علاقوں میں بجلی نظام شدید دباؤکا شکار ہے اوراس بات کو آڑ بناکر چند علاقوں میں بجلی بندش کے خلاف عوام کے ہونے والے احتجاج اور تھوڑ پھوڑ کے حوالے سے واضح کیا جاتا ہے کہ پسکو انتظامیہ نے صارفین کوبجلی کی فراہمی بلا کسی تعطل کے فراہم کرنے کے لئے خصوصی اقدامات اٹھائے ہیں اوراس ضمن میں فیلڈ فارمیشنز کو بھی ہدایات جاری کی گئیں ہیں تاکہ کہیں پر بھی بجلی کی فراہمی میں تعطل نہ آئے اور کسی بھی ٹیکنیکل فالٹ کی صورت میں بجلی بحالی کے لئے ہنگامی طورپر اقدامات اٹھائے جائیں. تاہم بعض علاقوں میں بجلی فراہمی نظام شدید اوورلوڈنگ کا شکارہے جس کی بنیادی وجہ بجلی کا ناجائز استعمال, ڈائریکٹ کنڈے اوربلوں کی عدم ادائیگی ہے.ڈائریکٹ کنڈوں کی وجہ سے بجلی فراہمی نظام اوورلوڈ ہوکر باربارٹرپ کرجاتا ہے جس کی وجہ سے صارفین کو بجلی کی فراہمی میں تعطل کا سامنا کرنا پڑتا ہے،.لیکن ان علاقوں میں جہا ں بجلی کا ناجائز استعمال نہیں ہے وہاں پر لوڈشیڈنگ کم سے کم ہے بلکہ نہ ہونے کے برابرہے اورعوام کو وہاں پرکوئی شکایات نہیں ہے،   پسکو واضح کرتاہے کہ اگر زیادہ لاسز والے علاقوں میں عوام پسکو سے تعاون کریں، کنڈے ہٹائیں اور بجلی کا ناجائز استعمال روک دیں  اوربجلی کے استعمال میں اعتدال سے کام لیں تو ان کو لوڈشیڈنگ میں نمایاں ریلیف دیا جائے گا،  احتجاج کی آڑ میں روڈ بلاک کرنا, توڑپھوڑ کرنا اورقانون کو ہاتھ میں لینا کسی مسئلے کا حل نہیں ہے،اگر بجلی کا ناجائز استعمال کرنے والے صارفین کنڈے ہٹادیں تو نہ صرف ان کو بلکہ دیگرصارفین کو  لوڈشیڈنگ کے دورانئے میں نمایاں کمی ہوجائے گی اوربجلی سے متعلقہ دیگرمسائل بھی حل ہوجائیں گے،پسکوکے ساتھ تعاون کے نتیجے میں تمام مسائل پر قابوپالیا جائے گا،صارفین کا تعاون بجلی کی مسلسل فراہمی اور بجلی سے متعلقہ دیگر مسائل کے حل کا سبب بنے گا،

مزید :

پشاورصفحہ آخر -