محکمہ صحت: 700 ڈیلی ویجز ڈینگی ورکرز بے روز گار کرنیکا منصوبہ فائنل 

       محکمہ صحت: 700 ڈیلی ویجز ڈینگی ورکرز بے روز گار کرنیکا منصوبہ فائنل 

  

 ملتان (وقا ئع نگار)  محکمہ صحت ملتان کے دو اعلی افسران کی آپس کی لڑائی کے باعث 7 سو کے قریب  ڈیلی ویجز ڈینگی ورکروں کو بے روزگار کرنے کا نیا پلان تشکیل دے دیا گیا ہے۔جس کے بعد دوبارہ بھرتی کیلئے آسامیوں کو مشتہر کیا جائے گا۔سفارشوں نے ایڈوانس(بقیہ نمبر30صفحہ6پر)

 امیدواروں کی سلیکشن کیلئے فائلیں سی ای او ہیلتھ کو جمع کروانی شروع کردیں ہیں۔باوثوق ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ محکمہ صحت ملتان کے سی ای او ہیلتھ ڈاکٹر ارشد ملک نے اپنے کارخاص کے ایماء  پر سات سو کے قریب  ڈینگی ورکروں کو نوکری سے فارغ کرنے کیلئے نیا پلان تشکیل دینا شروع کردیا ہے۔جس کے تحت وہ ڈیوٹی پر حاضر تمام ڈینگی ورکروں کو پہلے نوکری سے فارغ کریں گے۔پھر نئے امیدواروں کی بھرتی کیلئے آسامیوں کو مشتہر کریں گے۔انٹرویو میں کامیاب ہونے والے امیدواروں کو ڈیلی ویجز پر ڈینگی ورکر بھرتی کیا جائے گا۔ڈینگی ورکروں کے مطابق اگر سی ای او ہیلتھ نے ایسا کیا تو مجبورا احتجاج کا سہارا لیا جائے گا۔جسکی تمام تر ذمے داری محکمہ صحت انتظامیہ پر عائد ہوگی۔ڈینگی ورکروں نے یہ بھی کہا ہے کہ سابق ڈی ای او ہیلتھ نے ایک ایسا آڈر پاس کیا تھا۔جس میں تمام ڈینگی ورکروں کو نوکری سے نکال دیا گیا تھا۔پھر بھرپور احتجاج ہوا۔جسں کے بعد  سابق سی ای او  اپنے ڈینگی ورکروں کی نوکری کے برخاستگی کے احکامات کو واپس لینا پڑا ہے۔اور دوبارہ انکو نوکری پر بحال کردیا۔ڈینگی ورکروں نے اعلی صحت کے حکام سے مطالبہ کیا ہے کہ محکمہ صحت انتظامیہ ڈینگی ورکروں کی بیروزگار کرنے کے پلان کو تشکیل دینے سے روکا جائے۔ورنہ احتجاج کیا جائے گا۔

فائنل

مزید :

ملتان صفحہ آخر -