ویسٹ مینجمنٹ کمپنی، 25فیصد علاقے نظر انداز کرنیکا انکشاف،جگہ جگہ گندگی

    ویسٹ مینجمنٹ کمپنی، 25فیصد علاقے نظر انداز کرنیکا انکشاف،جگہ جگہ گندگی

  

 ملتان (سپیشل رپورٹر)  ضلعی انتظامیہ اور ملتان ویسٹ مینجمنٹ کمپنی کی جانب سے عیدالاضحی کے موقع پر شہر کی صفائی اور آلائشوں کو ٹھکانے لگانے کے بلند وبانگ دعوے کئے گئے ہیں مگر کمپنی انتظامیہ 68یونین کونسلوں کو مکمل طور پر صاف ستھرا کرنے میں ناکام نظر آئی شہر کی اہم(بقیہ نمبر36صفحہ6پر)

 شاہراہوں،پوش علاقوں اور مخصوص علاقوں میں تو صفائی ستھرائی کے فول پروف انتظامات کئے گئے تھے مگر شہر کے مضافاتی علاقوں عثمان آباد،پیر کالونی،لوہار کالونی،سنٹرل جیل سے ملحقہ کالونیاں،نیاز ٹاؤن،المصطفی ٹاؤن،نیل کوٹ،پیپلز کالونی،چین ماڑی،ودیگر علاقوں میں صفائی اور آلائشیں بدستور موجود رہیں آزاد ذرائع کے مطابق کمپنی انتظامیہ 68یونین کونسلوں کا 75فیصد علاقہ صاف کرنے میں کامیاب رہی جبکہ 25فیصد نظر انداز کریا گیا۔اسی طرح شہریوں کو آلائشوں کیلئے فراہم کردہ ان گریڈ ایبل شاپر بھی غیر معیاری نکلے جو بھاری بھرکم آلائشوں کو بوجھ برداشت نہ کرسکے اور پھٹ گئے۔حالانکہ کمپنی کی جانب سے شہریوں کو جدید سٹینڈرڈ کے شاپر فراہم کرنے کا دعوی کیا گیا تھا۔اسی طرح کمپنی کے سینٹری ورکرز نے کمپنی انتظامیہ کی جانب سے فراہم کئے جانے والے کھانے کو بھی غیر معیاری قرار دیا ہے سینٹری ورکر ز نے نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر بتایا کہ انھیں جو چاول فراہم کئے گئے وہ مقدار میں انتہائی کم تھے جبکہ ان میں مرچ اور نمک کی مقدار زیادہ ہونے کے باعث کھانے کے قابل نہ تھے اسی طرح دو ورکروں کو ایک پانی کی بوتل فراہم کی گئی اور باقی بوتلیں انسپکٹراور سپروائزر اپنے ساتھ لے گئے۔سینٹری ورکرز کا کہنا تھا کہ سپروائزروں کی جانب سے ہدایت کی گئی تھی کی وہ گھر سے ماسک لگا کرآئیں جبکہ کمپنی کی جانب سے فراہم کردہ ماسک بھی انھیں فراہم نہیں کئے گئے۔متاثرہ سینٹری ورکروں نے وزیر اعلی پنجاب سے ورکروں کیلئے فراہم کی جانے والی سہولیات پر شب خون مارنے والے کمپنی افسران کے خلاف اعلی سطحی تحقیقات کرانے کا مطالبہ کیا ہے۔۔

جگہ جگہ گندگی

مزید :

ملتان صفحہ آخر -