طیب اردوان کا، صدر اور وزیراعظم کو ٹیلیفون، مسئلہ کشمیر پر پاکستان کی بھر پور حمایت کا اعلان 

طیب اردوان کا، صدر اور وزیراعظم کو ٹیلیفون، مسئلہ کشمیر پر پاکستان کی بھر ...

  

 اسلام آباد(آئی این پی) ترک صدر رجب طیب اردوان نے عید  کے پہلے روز وزیراعظم عمران خان اور صدر مملکت عارف علوی  سے ٹیلیفونک رابطہ کیا، ترک صدر نے عمران خان کو عید کی مبارک باد دی، دونوں رہنماؤں کے درمیان عید کے تہوار پر عوام کے لیے نیک تمناؤں کا اظہار کیا گیا۔ ترک صدر رجب طیب اردوان نے کہا کہ کشمیر کے معاملے پر پاکستان اور ترکی کے اہداف ایک ہیں، ترکی کشمیر پر پاکستان کے موقف کی حمایت جاری رکھے گا، تفصیلات کے مطابق  ترکی کے صدر رجب طیب اردوان  نے وزیراعظم عمران خان اور صدر مملکت  سے ٹیلیفونک رابطہ کیا، دونوں رہنماؤں کے درمیان اہم علاقائی امور پر گفتگو کی گئی، داس موقع پردو طرفہ تعاون کو مزید مضبوط کرنے کے عزم کا اعادہ کیا گیا۔وزیراعظم نے کشمیر کاز کے لیے ترک صدر کی حمایت کرنے پر اطمینان کا اظہار کیا، ترک صدر نے مسئلہ کشمیر پر پاکستان کی حمایت جاری رکھنے کے عزم کا اظہار کیا، دونوں رہنماؤں نے مشترکہ مفادات کے معاملات پر رابطے میں رہنے کا فیصلہ کیا۔عمران خان نے ترک صدر کو آیا صوفیا مسجد کو دوبارہ کھولے جانے پر مبارک باد دیتے ہوئے کہا کہ لاکھوں پاکستانیوں نے مسجد کے مناظر ٹی وی پر دیکھے، وزیراعظم نے کرونا سے نمٹنے کے لیے اردوان کی کوششوں کی تعریف کی۔وزیراعظم نے پاکستان سمیت متعدد ممالک کو مدد فراہم کرنے پر ترک صدر سے اظہار تشکر کیا، دونوں رہنماؤں نے معاشی ترقی اور انسانیوں زندگیوں کو بچانے پر تبادلہ خیال کیا۔پاکستان اور ترکی نے میڈیسن ڈیولپمنٹ پر مشترکہ کوششوں پر اتفاق کیا، وزیراعظم نے کہا کہ پاک ترک اسٹریٹجک تعلقات اور باہمی اعتماد انتہائی ضروری ہے۔ترک صدر رجب طیب اردوان نے صدر مملکت  ڈاکٹر عارف علوی کو بھی  فون کیا اور انہیں عید کی مبطارکباد دیتے ہوئے کہا کہ ترکی کشمیر کے معاملے پر پاکستان کے موقف کی حمایت جاری رکھے گا۔صدر عارف علوی نے بھی ترک ہم منصب کو عید کی مبارک باد دی۔ڈاکٹر عارف علوی کا کہنا تھا کہ عید ایسے وقت منائی جا رہی ہے جب دنیا کو متعدد چیلنجز درپیش ہیں، کرونا وبا نے عالمی معیشت کو بری طرح متاثر کیا ہے۔صدر عارف علوی نے فون پر گفتگو کے دوران کرونا کے خلاف عالمی جنگ میں ترکی کے کردار کو سراہا، صدر مملکت نے مقبوضہ وادی میں کشمیریوں کی حالت زار پر بھی روشنی ڈالی اور خوف کے ماحول میں زندگی گزارنے والے بھارتی مسلمانوں کے مسائل کو اجاگر کیا۔صدر مملکت نے ہم منصب کو بتایا کہ مقبوضہ کشمیر میں جارحانہ بھارتی اقدامات کو ایک سال مکمل ہونے کو ہے، کرونا بحران کے باوجود قابض حکومتوں کے فلسطین اور کشمیر میں مظالم جاری ہیں۔ترک صدر رجب اردوان نے کہا کہ کشمیر کے معاملے پر پاکستان اور ترکی کے اہداف ایک ہیں، ترکی کشمیر پر پاکستان کے مقف کی حمایت جاری رکھے گا۔دریں اثنا، ترک صدر نے عارف علوی کو کرونا کے خاتمے پر ترکی کے دورے کی دعوت دی۔

ترک صدر

مزید :

صفحہ اول -