بلدےاتی انتخابا ت سر کاری ملازمین کی نگرانی میںکسی طور قبول نہیں، اپوزیشن

بلدےاتی انتخابا ت سر کاری ملازمین کی نگرانی میںکسی طور قبول نہیں، اپوزیشن

لاہور(شہزاد ملک ) ملک کی بڑی اپوزیشن جماعتوں پاکستان پیپلز پارٹی ‘پاکستان تحریک انصاف اور مسلم لیگ(ق) نے اس بات پر اتفاق رائے کیا ہے کہ اگر بلدےاتی انتخابات الیکشن کمیشن کی بجائے سرکاری ملازمین کی نگرانی میں کروائے گئے تو انھیں کسی بھی قیمت پر قبول نہیں کیا جائے گا اور حکومت پر صرف الیکشن کمیشن کے تحت ہی الیکشن کروانے کا نہ صرف مطالبہ کیا جائے گا بلکہ دباﺅ بھی ڈالا جائے گا اور اگر اس مقصد کے لئے مشترکہ جدوجہد بھی کرنی پڑی تو اس سے بھی دریغ نہیں کیا جائے گا ۔پیپلز پارٹی کے ذرائع نے” پاکستان “ کو بتایا ہے کہ ملک کی بڑی اہم سیاسی جماعتوں کا اس بات پر مکمل اتفاق رائے ہے کہ سٹی گورنمنٹ کے ملازمین ےا پھر صوبائی محکموں میں کام کرنے والے ملازمین کی نگرانی میں کروائے گئے تو ایسے انتخابات سوالیہ نشان بن کر رہ جائیں گے کیونکہ صوبائی اور سٹی حکومتیں مسلم لیگ (ن) کی حکومت کے ملازمین ہیں اس لئے ان انتخابات پر سب کو انگلیاں اٹھانے کا موقع ملے گا اور کارکنان بھی اس کو تسلیم نہیں کریں گے۔ پیپلز پارٹی کے ذرائع کا مزید کہنا ہے کہ اس ضمن میں پیپلز پارٹی نے تحریک انصاف اور مسلم لیگ (ق) کے ساتھ مشاورت مکمل کر لی ہے اور ان جماعتوں کا بھی ےہی موقف ہے ۔

اپوزیشن اتفاق رائے

مزید : صفحہ آخر


loading...