شہبازشریف پنجاب یونیورسٹی کے مسئلہ پرنوٹس لیں ،لیاقت بلوچ

شہبازشریف پنجاب یونیورسٹی کے مسئلہ پرنوٹس لیں ،لیاقت بلوچ

لاہور(خبر نگار )جماعت اسلامی پاکستان کے سیکرٹری جنرل اور سابق ممبر قومی اسمبلی لیاقت بلوچ نے کہا ہے کہ وزیراعلیٰ پنجاب شہبازشریف پنجاب یونیورسٹی کے مسئلہ پرنوٹس لیں ، محض گورنر ، وزیرتعلیم ، وزیر قانون کے دھمکی آمیز بیانات مسائل کا حل نہیں ،وزیراعلیٰ عدالتی کمیشن بنائیں تاکہ تمام حالات کی تحقیقات ہوں اور جامعہ پنجاب کے ماتھے پر لگے بدنامی کے داغ صاف ہوں اور والدین ، سول سوسائٹی اور محبان جامع کو سکون ملے۔منصورہ میں ہنگامی مشاورتی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ پنجاب یونیورسٹی قدیم مادر علمی ہے ، یونیورسٹی کے حالات پر والدین ،سول سوسائٹی اور جامعہ کے محبان شدید پریشان اور مضطرب ہیں ، گزشتہ کئی سالوں سے یونیورسٹی میں تعلیمی تنزلی ، بد انتظامی ، اخلاق و کردار کی خرابی ، عدالتوں اور محتسب کے اداروں تک مقدمات مسلسل بدنامی کا باعث بن رہے ہیں ۔ ہر مرحلہ پر سوچے سمجھے منصوبہ کے ساتھ جامعہ پنجاب کے اصل مسائل حل کرنے اور اصلاح احوال کی بجائے رٹے رٹائے طریقوں کے مطابق اسلامی جمعیت طلبہ کے خلاف مہم جوئی کی جاتی ہے ۔ گزشتہ پانچ سال میں جو سکینڈل یونیورسٹی سے باہر منظر عام پر آئے ہیں ،ہر موڑ پر اسلامی جمعیت طلبہ کے خلاف الزام تراشی کی گئی ان سب کا کیا ہوا ، کسی کو معلوم نہیں ۔ جامع پنجاب کی تازہ صورتحال تشویشناک ہے ۔ انتظامیہ ، ملازمین ، اساتذہ ، طلبہ کے درمیان کشیدگی حد درجہ خطرناک ہے ۔ انہوں نے کہاکہ وزیراعلیٰ پنجاب شہبازشریف نوٹس لیں ، محض گورنر ، وزیرتعلیم ، وزیر قانون کے دھمکی آمیز بیانات مسائل کا حل نہیں ۔ وزیراعلیٰ عدالتی کمیشن بنائیں تاکہ تمام حالات کی تحقیقات ہوں اور جامعہ پنجاب کے ماتھے پر لگے بدنامی کے داغ صاف ہوں اور والدین ، سول سوسائٹی اور محبان جامع کو سکون ملے ۔لیاقت بلوچ نے کہاکہ انسانیت کا قاتل اور دہشتگردی کا گرو امریکہ ہے ۔ عراق اور افغانستان کی تباہی کے بعد پاکستان نشانہ ہے ۔ پاکستان کی ایٹمی صلاحیت پر قابو پانے کے لیے عدم استحکام ، ناکام ریاست ثابت کرنے ، غیر ذمہ دارانہ قوم ثابت کرنے کے لیے فرقہ واریت کی آگ بھڑکائی جارہی ہے ۔ حکمران امریکی اشاروں پر مسلسل ناچ رہے ہیں ۔ مشرف اور زرداری کی پالیسیوں کا نوازشریف دور میں بھی تسلسل جاری ہے ۔ امریکہ ڈرون حملوں میں انسانوں کو قتل کر رہاہے اور حکمران مہنگائی اور بے روزگاری کے ڈرون حملے کر رہے ہیں ۔ انہوں نے کہاکہ آزادی ، خود مختاری ، وقار کی بحالی ، نیٹو سپلائی بند کرانے ، ڈرون حملوں کے خلاف ڈٹ جانے اور مہنگائی ، بے روزگاری و بدامنی کے خلاف احتجاج کے لیے زندہ دلان لاہور 8 دسمبر کو لاہور میں عوامی مارچ میں شریک ہوں ۔

مزید : صفحہ آخر


loading...