الطاف حسین برطانوی شہری ہیں، وہاں بیٹھ کر بے بنیاد الزامات لگا رہے ہیں،جماعت اسلامی

الطاف حسین برطانوی شہری ہیں، وہاں بیٹھ کر بے بنیاد الزامات لگا رہے ...

لاہور ( آئی این پی ) جماعت اسلامی پاکستان کے ترجمان ڈاکٹر فرید احمد پراچہ نے ایم کیو ایم کے قائد الطاف حسین کی طرف سے جماعت اسلامی پر الزامات کو لغو قرار دیتے ہوئے ان کی سختی سے تردید کی ہے۔ اپنے بیان میں ڈاکٹر فرید احمد پراچہ نے کہا ہے کہ الطاف حسین برطانوی شہری ہیں اور وہاں بیٹھ کر جماعت اسلامی پر بے بنیاد الزامات لگا رہے ہیں جو اخلاقی طور پر بھی غلط ہے۔ الطاف حسین کے بیانات سنجیدہ نوعیت کے نہیں ہوتے، وہ اس سے پہلے پاکستان کے علما ، وکلا، صحافیوں اور فوج کے بارے میں سخت ترین زبان استعمال کر چکے ہیں اور اب بھی اپنے بیان میں فوج کو دھمکی دی ہے ۔ جماعت اسلامی پابند قانون جماعت ہے ۔ ہم سیاست کا مقابلہ سیاسی جدوجہد کے میدان میں کرتے ہیں اور ہم میڈیا سے ملنے والی لائیو کوریج کی سہولت سے میڈیا ٹرائل کرنے کے حق میں نہیں ہیں ۔ جماعت اسلامی پر پابندی کے خواب کئی لوگوں نے دیکھے جو ہمیشہ عدالتوں کے سامنے چکنا چور ہوگئے ۔ایوب خان نے بھی جماعت اسلامی پر پابندی لگائی تھی اللہ نے عدالت عظمیٰ کے ذریعے اسے سرخرو کیا اب بھی الطاف حسین کی خواہش انشاءاللہ پوری نہیں ہوگی۔ کراچی کے اندر جماعت اسلامی بڑی طاقت ہے ۔ ہم بلدیاتی الیکشن میں بھر پور حصہ بھی لیں گے اور کامیاب بھی ہوں گے ۔ انہوں نے کہاکہ ڈرون حملوں میں کون مر رہاہے ، اس کا ہمیں کوئی علم نہیں ۔ انہو ں نے کہاکہ الطاف حسین کا پاکستان کی مخالفت کا الزام لغو اور بے بنیاد ہے ،یہ کوئی نیا الزام نہیں ہے،علا وہ ازےںاسلامی جمعیت طلبہ کے ترجمان کا کہنا ہے کہ ایم کیو ایم کے قائد الطاف حسین کراچی میں آپریشن کا غصہ اسلامی جمعیت پر اتار رہے ہیں۔ لاہورسے جاری ہونے والی پریس ریلیز میں ترجمان کا کہنا ہے کہ الطاف حسین کو کوئی حق نہیں پہنچتا کہ جمعیت پر بیان بیازی کریں۔انہوں نے الزام عائد کیا کہ ایم کیوایم کراچی میں جمعیت کے سیکڑوں کارکنوں کی قاتل ہے، ان قاتلوں کو عدالتوں کی طرف سے سزائیں بھی ہوچکی ہیں۔

جماعت اسلامی

مزید : صفحہ اول


loading...