کراچی کی نئی حلقہ بندیاں ہائیکورٹ میں چیلنج

کراچی کی نئی حلقہ بندیاں ہائیکورٹ میں چیلنج
کراچی کی نئی حلقہ بندیاں ہائیکورٹ میں چیلنج

  


 کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک) متحدہ قومی موومنٹ(ایم کیوایم ) نے کراچی کی حلقہ بندیوں کو سندھ ہائی کورٹ میں چیلنج کردیا ہے اورموقف اپنایا کہ شہر میں کی گئی حلقہ بندیاں غیرآئینی اور غیرجمہوری ہیں۔ ایم کیوایم کے ڈپٹی کنوینئر ڈاکٹرفاروق ستار کی طرف سے سندھ ہائیکورٹ میں دائر درخواست میں موقف اپنایاگیاکہ حلقہ بندیاں انتخابات سے قبل بڑی دھاندلی کے برابر ہے، سیاسی مقاصد کیلئے غلط حلقہ بندیاں کی جارہی ہیں۔درخواست گزار کے مطابق ضلع جنوبی اور ملیر میں کی گئی حلقہ بندیاں ایم کیوایم کے مینڈیٹ کو نقصان پہنچانے کی کوشش ہے،عدالت نئی حلقہ بندیوں کو کالعدم قرار دے۔فاروق ستار کا کہنا تھاکہ ہرضلع کونسل میں یونین کونسل کی آبادی یکساں ہونی چاہیے ، کہیں 40 سے 50 ہزارآبادی پر اور کہیں 10 سے 15 ہزار آبادی پر حلقے بنائے گئے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ یوسی کومیونسپل کارپوریشن میں شامل کردیاگیاہے جو لوکل گورنمنٹ ایکٹ کی خلاف ورزی ہے۔

مزید : کراچی


loading...