پاک بھارت سیاحتی معاہدے میں رکاوٹ پاکستان کی طرف سے ہے:ڈاکٹر ٹی سی راگھون

پاک بھارت سیاحتی معاہدے میں رکاوٹ پاکستان کی طرف سے ہے:ڈاکٹر ٹی سی راگھون
پاک بھارت سیاحتی معاہدے میں رکاوٹ پاکستان کی طرف سے ہے:ڈاکٹر ٹی سی راگھون

  


کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک)پاکستان میں بھارتی ہائی کمشنر ڈاکٹر ٹی سی راگھون نے کہا ہے کہ پاک بھارت سیاحتی معاہدے میں رکاوٹ پاکستان کی طرف سے ہے، پاکستان اپنے ٹور آپریٹرز کے نام دیدے تو معاہدے پر عمل درآمد کل سے شروع ہو سکتا ہے۔کراچی چیمبر کے دورے کے موقع پر تاجروں سے خطاب کرتے ہوئے ان کا کہناتھا کہ بھارت پر پانی چوری کے الزامات غلط ہیں، بھارت اپنا پانی سندھ طاس معاہدے کے تحت لے رہا ہے، کشمیر سمیت تمام اہم مسئلے تجارت کے ذریعے ہی حل کیے جاسکتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان سے تاجروں کو بھارت کے مزید شہروں کا ویزا دینے کے لیے غور کر رہے ہیں جبکہ گروپ ٹورسٹ ویزے کے لیے بھارت نے ٹور آپریٹرز کی لسٹ پاکستان کے حوالے کردی ہے۔ پاکستان سے لسٹ کا انتظار ہے جس کے بعد اس ویزا پر پیش کا عمل شروع ہوگا۔ ڈاکٹر راگھون نے کہا کہ خطے کے لیے سال 2013ءاور 2014ءاہم ترین ہیں۔ پاکستان سے بھارت کو برآمدات میں اس سال 50کروڑ ڈالر کا اضافہ متوقع ہے۔

مزید : بین الاقوامی


loading...