ٹیکسٹائل سیکٹر کی طرف سے جننگ فیکٹریوں سے روئی کی خریدراری میں کمی

ٹیکسٹائل سیکٹر کی طرف سے جننگ فیکٹریوں سے روئی کی خریدراری میں کمی

لاہور( این این آئی )ٹیکسٹائل سیکٹر کی طرف سے جننگ فیکٹریوں سے روئی کی خریداری میں کمی ریکارڈ کی گئی ہے ،ٹیکسٹائل سیکٹر نے یکم دسمبر تک6289399گانٹھیں خریدیں جبکہ گزشتہ سال اسی مدت میں جننگ فیکٹریوں سے 9375690گانٹھیں خرید کی گئی تھیں،پنجاب میں کپاس پیداکرنے والے تمام اضلاع جبکہ سندھ کے 6 اضلاع میں کپاس کی پیدوارمیں کمی ریکارڈکی گئی ہے ۔پاکستان کاٹن جنرزایسوسی ایشن کی رپورٹ کے مطابق ٹیکسٹائل سیکٹر نے پنجاب سے یکم دسمبر تک روئی کی3728701گانٹھیں خرید کیں جبکہ جبکہ گزشتہ اسی عرصے میں یہ حجم 6763644تھا۔سندھ میںیکم دسمبر تک 2560698گانٹھیں خرید کی گئیں جبکہ گزشتہ سال اسی عرصہ میں روئی کی2612046گانٹھیں خرید کی گئیں۔رپورٹ میں مزید بتایاگیا ہے کہ پنجاب میں کپاس پیداکرنے والے تمام اضلاع میں6.75فیصدسے لے کر70.00فیصدکمی ریکارڈ کی گئی ہے جبکہ سندھ کے 11میں سے 6 اضلاع میں پیدوارمیں کمی ریکارڈکی گئی ۔ضلع سانگھڑ کپاس کی پیداوارمیں 8.87فیصدکمی کے باوجودملک بھرمیں سب سے زیادہ پیداوارکااعزازبرقراررکھا۔رپورٹ کے مطابق یکم دسمبرتک گزشتہ سال کی نسبت پنجاب میں کپاس کی پیداوارمیں 39.95فیصد،سندھ میں 3.26فیصداوربلوچستان میں 9فیصدکمی ریکارڈکی گئی ہے ۔پنجاب میںیکم دسمبر تک 5103092گانٹھیں کپاس کی آمدہوئی جبکہ گزشتہ سال کے اسی عرصہ میں 8498129گانٹھ کپاس آئی تھی ،سندھ میں یکم دسمبرتک3528841گانٹھ کپاس جننگ فیکٹریوں میں پہنچی جبکہ گزشتہ سال کے اسی عرصہ میں3647576گانٹھ کپاس فیکٹریوں میں پہنچی تھی۔ملک بھر کی جننگ فیکٹریوں میں کپاس کی آمد میں بتدریج کمی آنے کی وجہ سے یکم دسمبر تک 8631933گانٹھ کپاس کی آمد ریکارڈ کی گئی جوگزشتہ سال کے اسی عرصے سے 28.93فیصد کم ہے۔

برآمدکنندگان نے 352826گانٹھ روئی کی خریداری کی جبکہ ٹیکسٹائل سیکٹر نے 6289399گانٹھ روئی خریدی۔

مزید : کامرس