پنجاب میں ہیلتھ انشورنس سکیم جلدشروع کی جا رہی ہے،جواد رفیق ملک

پنجاب میں ہیلتھ انشورنس سکیم جلدشروع کی جا رہی ہے،جواد رفیق ملک

لاہور( جنرل رپورٹر) جرمنی کے ادارے GIZکے پانچ رکنی وفد نے سیکرٹری ہیلتھ پنجاب جواد رفیق ملک سے ان کے دفتر میں ملاقات کی۔ وفد کی سربراہی پبلک ہیلتھ پروگرام کے کنسلٹنٹ ایبرہارڈ کوب کر رہے تھے۔ وفد میں GIZکے پاکستان میں نمائندے عمران مسعود بھی شامل تھے۔ ملاقات میں سپیشل سیکرٹری ہیلتھ گلزار حسین، ڈائریکٹر جنرل ہیلتھ ڈاکٹر امجد شہزاد، ممبر ہیلتھ پی اینڈ ڈی ڈاکٹر شبانہ اور پالیسی اینڈ سٹریٹجک پلاننگ یونٹ کی ایڈیشنل پروگرام منیجر ڈاکٹر زاہدہ سرور اور دیگر افسران بھی موجود تھے۔ سیکرٹری ہیلتھ نے پنجاب میں صحت کے شعبہ میں ہونے والی اصلاحات اور غریب مریضوں کے حقوق کے تحفظ کیلئے وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہباز شریف کی ہدایت پر کئے گئے اقدامات سے وفد کو آگاہ کیا۔ جواد رفیق ملک نے بتایا کہ وفاقی حکومت کے علاوہ صوبائی حکومت بھی پنجاب میں ہیلتھ انشورنس سکیم شروع کر رہی ہے اور توقع ہے کہ یہ سکیم مارچ 2016ء میں شروع کر دی جائے گی جس کیلئے تیاریاں مکمل کی جا رہی ہیں۔ انہوں نے بتایاکہ ہیلتھ انشورنس سکیم کیلئے پانچ فرموں کی شارٹ لسٹنگ کر لی گئی ہے اور متعلقہ فرمیں اپنی Bidsدیں گی اور ایک ہفتہ کے اندر ان کا جائزہ لے کر کوالیفائی کرنے والی انشورنس فرم کو ہیلتھ انشورنس شروع کرنے کا ذمہ دے دیا جائے گا۔سیکرٹری صحت نے بتایا کہ ہیلتھ انشورنس سکیم کے معاملات چلانے کیلئے پنجاب ہیلتھ مینجمنٹ انیشیٹوز کمپنی (PHMIC)قائم کر دی گئی ہے۔ انہوں نے بتایا کہ محکمہ صحت میں ہر قسم کی خریداری کیلئے شفافیت کو فوقیت دی جاتی ہے جس کیلئے PAPRA رولز کو سختی سے فالو کیاجاتا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ پنجاب میں ڈسٹرکٹ ہیلتھ اتھارٹیز کا قیام بھی جلد عمل میں آجائے گا۔جرمن وفد کے سربراہ ایبرہارڈ کوب نے پنجاب میں صحت کے شعبہ میں ہونے والی اصلاحات اور غریب مریضوں کو سوشل ہیلتھ پروٹیکشن فراہم کرنے کیلئے ہیلتھ انشورنس سکیم کے اجراء اور دیگر اقدامات کو سراہتے ہوئے موجودہ تعاون کو مزید فروغ دینے اور مستقبل میں لانگ ٹرم ٹیکنیکل کواپریشن کیلئے پوٹینشل ایریاز تلاش کرنے میں گہری دلچسپی ظاہر کی۔ انہوں نے کہاکہ جرمنی کا ادارہ سوشل پروٹیکشن اور ہیلتھ کے شعبہ میں پنجاب کے ساتھ تعاون کو فروغ دے گا۔

مزید : صفحہ آخر