ایس ایم ایس (شارٹ میسج سروس) کو 23 سال مکمل ہو گئے

ایس ایم ایس (شارٹ میسج سروس) کو 23 سال مکمل ہو گئے
ایس ایم ایس (شارٹ میسج سروس) کو 23 سال مکمل ہو گئے

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

لندن(آئی این پی) موبائل فون کے ذریعے پیغام رسانی کے طریقے ایس ایم ایس (شارٹ میسج سروس) کو 23 سال مکمل ہو گئے۔میڈیا رپورٹس کے مطابق دنیا کا پہلا ایس ایم ایس 3 دسمبر 1992 کو بھیجا گیا تھا جس میں ’’کرسمس مبارک‘‘ ٹائپ کیا گیا تھا۔یہ ایس ایم ایس برطانیہ کی ایک ٹیلی کام کمپنی سیما گروپ کے 22 سالہ ملازم نیل پاپورتھ نے کرسمس پارٹی میں مصروف کمپنی کے ڈائریکٹر رچرڈ دیرواس کو ارسال کیا تھا۔نیل پاپورتھ نے یہ میسج کمپیوٹر کے ذریعے ٹائپ کرکے ارسال کیا تھا کیونکہ اس وقت تک ٹیلی فون میں کی۔بورڈ کی سہولت نہیں تھی جبکہ نیل پاپورتھ کو اپنے اوربیٹل 901 ہنڈ سیٹ پر یہ پیغام موصول ہوا تھا۔ایس ایم ایس جہاں رابطے کا آسان ذریعہ ہے وہیں اس سے لمبے چوڑے خطوط کی پرانی روایت بھی ختم ہوتی جارہی ہے۔دنیا بھر میں موبائل فون صارفین کی 80 فیصد تعداد ایس ایم ایس سے استفادہ کرتے ہیں جبکہ ایک اندازے کے مطابق دنیا بھر میں تقریبا چار ارب افراد ایس ایم ایس کی سہولت سے فائدہ اٹھا رہے ہیں۔ایس ایم ایس میں موبائل صارفین کوئی بھی پیغام 160 انگریزی حروف تہجی میں ٹائپ کر کے ارسال کر سکتے ہیں۔

مزید : ڈیلی بائیٹس