لوڈ شیڈنگ سے70فیصدصنعتیں بند ہوگئی ہیں ،میاں کامران

لوڈ شیڈنگ سے70فیصدصنعتیں بند ہوگئی ہیں ،میاں کامران

لاہور(پ ر)مسلم لیگ( ق )کے راہنمامیاں کامران سیف نے کہا ہے کہ ملک بھر میں گیس و بجلی کی لوڈ شیڈنگ سے عوام پریشانی کا شکار ہیں ۔جنوبی پنجاب میں بدترین لوڈ شیڈنگ سے70فیصدصنعتیں بند ہوگئی ہیں انڈسٹریز بند ہونے سے لاکھوں مزدور بے روزگار اور مالکان مالی مشکلات کا شکار ہیں ان خیالات کا اظہار انہوں نے مسلم لیگ ہاؤس میں کارکنوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔میاں کامران سیف نے کہا کہ جنوبی پنجاب میں بجلی و گیس کی بدترین لوڈ شیڈنگ سے 70فیصد انڈسٹریز بند ہونے سے 65 فیصد ایکسپورٹ متاثر ہوئی ہے۔جس سے گزشتہ چند سالوں میں اب تک60لاکھ مزدور بے روزگار ہوچکے ہیں لیکن اس کے باوجود حکومت ٹیکسٹائل پیکیج پر عملدرآمد نہیں کررہی انہوں نے کہا کہ ملکی ایکسپورٹ بڑھانے کے لیے حکومت بھارت کی تمام مصنوعات کا بائیکاٹ کرے اور بھارت سے پرجوش تجارتی تعلقات کا خاتمہ کیا جائے ۔انہوں نے کہا کہ حکومت کی ناقص پالیسیوں کے باعث اور توانائی بحران سے ملکی انڈسٹریز کو شدید نقصان پہنچ رہا ہے انہوں نے کہا کہ برسراقتدار آنے سے قبل 6ماہ میں توانائی بحران کا خاتمہ کا اعلان کرنے والوں نے ملک کو اندھیروں میں ڈبودیا ہے انتخاب سے قبل بجلی بند گیس بند کے اشتہارات دینے والے اب یہ دونوں چیزوں کے بند ہونے کے باوجود خاموش تماشائی ہیں ۔

مزید : میٹروپولیٹن 1