پی ایم اے کا ہنگامی اجلاس،ڈاکٹر تحسینہ ظفر کے بیٹے کے اغواء کی مذمت

پی ایم اے کا ہنگامی اجلاس،ڈاکٹر تحسینہ ظفر کے بیٹے کے اغواء کی مذمت

لاہور(جنرل رپورٹر) پی ایم اے لاہور کا ہنگامی اجلاس زیر صدارت ڈاکٹر محمد تنویر انور پی ایم اے ہاؤس لاہور میں منعقد ہوا۔ اجلاس میں پروفیسر ڈاکٹر محمد اشرف نظامی، عظیم الدین زاہد،ڈاکٹر اظہار چوہدری، ڈاکٹر کامران سعید،ڈاکٹر شاہد ملک، ڈاکٹر اسماء یاسین ، ڈاکٹر یاسمین احسان،ڈاکٹر رانا سہیل، ڈاکٹرارم شہزادی، ڈاکٹر علیم نواز، ڈاکٹر واجد علی، ڈاکٹر طلحہ شیروانی نے شرکت کی۔ اجلاس میں پی ایم اے کی عہدیدارڈاکٹر تحسینہ ظفر کے بیٹے کے اغوا پر گہرے غم و غصہ کا اظہا ر کیا گیا اور ایک قرارداد کے ذریعے وزیراعلیٰ پنجاب، آئی جی پنجاب پولیس اور لاہور پولیس سے نامزد ملزم مسعود پرویز وغیرہ کی عدم گرفتاری پر گہر ی تشویش کا اظہار کیا گیا۔ اور قرار دیا گیا کہ تھانہ نواب ٹاؤن میں چار روز قبل ایف آئی آر درج ہونے کے باوجود پولیس روایتی تساہل سے کام لے رہی ہے جبکہ ملزم مدعیہ کو جان سے مارنے کی دھمکیاں بھی دے رہا ہے۔ڈی آئی جی آپریشن کی طرف سے بچے کی بازیابی کا دعویٰ بھی جھوٹا نکلا۔عہدیداران نے مطالبہ کیا کہ اگر 48 گھنٹے کے اندر ملزمان کو گرفتار نہ کیا گیااور بچہ کو بازیاب نہ کرایا گیا۔

مزید : میٹروپولیٹن 1