قطری شہزادے شیخ حمد بن جاسم کی لاہور آمد ،وزیر اعظم سے ملاقات

قطری شہزادے شیخ حمد بن جاسم کی لاہور آمد ،وزیر اعظم سے ملاقات

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک ) پانامہ لیکس میں لندن فلیٹس سے متعلق اپنے خط کے ذریعے پاکستان میں شہرت پانے والے قطری شہزادے شیخ حمد بن جاسم کی پاکستان آمد،لاہور میں وزیر اعظم سے ملاقات،حمد بن جاسم الثانی شاہی خاندان کے 14افراد کے ہمراہ لاہور پہنچے،ایئر پورٹ پر حسن نواز نے استقبال کیا،وفد نے جاتی عمرہ میں نواز شریف اور شہبا ز شریف کے ساتھ کھانا کھایا،قطری وفد شکار کے لئے فیصل آباد پہنچ گیا، وفد کے ارکان بھکر بھی جائیں گے، چار روزہ دورہ نجی نوعیت کا ہے۔میڈیا رپورٹس کے مطابق ہفتہ کو قطر میں ملک کے سرپرست اعلیٰ شیخ حمد بن جاسم بن جبار الثانی قطری کے شاہی خاندان کے 14افراد کے وفد کے ساتھ خصوصی طیارے میں قطر سے لاہور پہنچے جہاں ان کا استقبال وزیراعظم نواز شریف کے صاحبزادے حسن نواز نے ہوائی اڈے پر استقبال کیا۔ بعد میں یہ وفد حسن نواز کے ہمراہ جاتی عمرہ پہنچا جہاں وزیر اعظم نواز شریف اور وزیر اعلیٰ پنجاب میاں شہباز شریف پہلے سے موجود تھے۔وفد کی قیادت ہادی المظفری کر رہے تھے ۔ وفد کے اراکین نے دوپہر کا کھانا جاتی عمرہ رائیونڈ میں وزیر اعظم میاں نواز شریف اور وزیر اعلی میاں شہباز شریف کے ساتھ کھایا۔قطری وفد کچھ دیر جاتی عمرہ رہنے کے بعد خصوصی طیارے کی ذریعے شکار کے لئے فیصل آباد روانہ ہو گیا۔قطری خاندان کے افراد پر مشتمل وفد خصوصی طیارے کے ذریعے فیصل آباد پہنچا تو فیصل آباد ائیر پورٹ سے قطری شہزادے حصام بن جاسم اور دیگر ارکان کو وی وی آئی پی پروٹوکول میں لے جایا گیا۔ وفد فیصل آباد سے سڑک کے ذریعے بھکر روانہ ہو گا۔ قطری خاندان کے افراد بکھر میں رکھ ماڑی کیمپ میں رکیں گے جہاں سکیورٹی کے سخت انتظامات کئے گئے ہیں۔ قطری خاندان کے افراد وہاں تلور کا شکار کھیلیں گے۔ وفد کے 4 سے 5 دن بھکر میں رہنے کی توقع ہے جہاں وہ نایاب پرندے تلور کا شکار کرینگے ،اس مقصد کیلئے وفد کو پہلے ہی اجازت نامے جاری کئے ج چکے ہیں ،قطر کے شاہی خاندان کے اراکین اس موسم میں تلور کے شکار کیلئے پاکستا ن آتے ہیں ۔واضح رہے حمد بن جاسم الثانی اس وقت قطر کے سرپرست اعلیٰ ہیں اور وہ2007سے 2013تک قطر کے وزیر اعظم بھی رہ چکے ہیں ۔

قطری شہزادے

مزید : صفحہ اول