حکمران ٹولے نے ملک میں تعلیمی نظام کا بیڑا غرق کر دیا :سراج الحق

حکمران ٹولے نے ملک میں تعلیمی نظام کا بیڑا غرق کر دیا :سراج الحق

تیمرگرہ ( بیو رو رپو ر ٹ ) مرکزی حکومت خیبر پختونخوا بجلی خالص منافع ادا کرئے،حکومت میں ائے تو تعلیمی بجٹ بڑھا کر والدین کے سر سے پرائیویٹ تعلیمی اداروں کا بوجھ اتار دیں گے،مرکز کے پی کے میں بجلی منصوبوں میں سرمایہ کاری کرکے بیرونی قرضوں کا بوجھ اتار دیں،ان خیالات کا اظہار جماعت اسلامی کے مرکزی امیر سینیٹر سراج الحق نے گورنمنٹ ہائیر سیکنڈری سکول ثمرباغ میں طلبہ اسمبلی اور مختلف وفود سے بات چیت کرتے ہوئے کیا سینیٹر سراج الحق نے کہا کہ پاکستان پر مسلط ٹولے نے تعلیمی نظام کا بیڑا غرق کرکے رکھ دیا ہے حکومت کے ترجیحات میں تعلیم کی بڑھوتری نہیں بلکہ کرپشن کے نت نئے راہیں تلاش کرنا ہے جو باعث شرم ہیں انھوں نے اس عزم کا اعادہ کیا کہ اگر جماعت اسلامی اقتدار میں ائی تو تعلیمی بجٹ دو فیصد سے بڑھا کر پانچ فیصد کرینگے جس سے تعلیمی معیار میں اضافہ ہوگا اور والدین کے سر سے پرائیویٹ سکولز کا بھوت اتر جائے گا جماعت اسلامی نصاب تعلیم کو موجودہ زمانے کے تقاضوں سے ہم آہنگ کرکے یکساں نظام تعلیم اور مفت تعلیم کی فراہمی کا خواب شرمندہ تعبیر کرئے گی انھوں نے مرکزی حکومت سے مطالبہ کیا کہ بجٹ کا زیادہ حصہ تعلیم اور صحت کے لئے مختص کرئے تاکہ عوام کے بنیادی مسائل حل ہوسکے سینیٹر سراج الحق نے مرکزی حکومت کو متوجہ کرتے ہوئے کہا کہ خیبر پختونخوا میں بجلی اور ٹورازم کے نہایت اعلیٰ مواقع ہے جس پر سرمایہ کاری کرکے آئی ایم ایف اور دوسری بیرونی قرضہ جات اسانی سے ادا ہوسکتے ہیں حکومتی عدم توجہی سے سرمایہ کاری کے سنہرے مواقع ضائع ہورہے ہیں جو باعث تشویش ہے انھوں نے مرکزی حکومت سے مطالبہ کیا کہ صوبہ خیبر کے خالص بجلی منافع کے بقایات جلدازجلد ادا کرئے تاکہ صوبے کو اپنا حق مل سکیں مرکزی حکومت صوبے کی ترقی میں روڑے اٹکانے کے بجائے ساتھ دیں سینیٹر سراج الحق نے صوبہ خیبر کے بلدیاتی نظام کو مثالی قرار دیتے ہوئے کہا کہ باقی صوبے خیبر کے بلدیاتی نظام کو اپنا کر عوام کے مسائل گھر کی دہلیز پر حل کرنے کا روڈ میپ لے لیں ۔

مزید : کراچی صفحہ اول